.

ترکی اور یونان کے درمیان کشیدگی پر نظر ہے: یورپی عہدیدار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یورپی فوجی کمیشن کے سربراہ جنرل کلاڈو گریزاو نے پیر کے روز العربیہ ٹی وی چینل سے بات کرتےہوئے کہا ہے کہ مشرقی بحیرہ روم میں ترکی اور یونان کے مابین بڑھتی ہوئی کشیدگی کی نگرانی جاری ہے۔

انہوں نے انکشاف کیا کہ یورپی یونین کے ممالک مشرقی بحیرہ روم کے بحران میں یونان کی حمایت کرتے ہیں۔

ادھر کل پیر کے روز ترک ایکسپلوریشن بحری جہاز قبرص کے ساحل سے اپنے مقام سے پیچھے ہٹنے کے بعد شمال کی سمت میں تُرک بندرگاہوں کی طرف روانہ ہو گیا۔

گذشتہ ماہ مشرقی بحیرہ روم میں ترکی یونان کے درمیان تیزی کےساتھ بڑھتی کشیدگی نے دونوں ملکوں کو جنگ کے دھانے پر لا کھڑا کیا تھا۔

یورپی عہدیدار نے کہا کہ بحیرہ روم میں سمندری تحفظ یورپی یونین کی ترجیح ہے۔ انہوں نے یورپی ممالک پر زور دیا کہ وہ بحیرہ روم میں ترکی اور یونان کو ایک دوسرے کے خلاف مزید محاذ آرائی سے روکیں۔

انہوں نے کہا کہ بحیرہ روم میں دہشت گردی اور غیر قانونی امیگریشن کے علاوہ روس کا چیلنج بھی درپیش ہے۔ انہوں نے بتایا کہ لیبیا سے متعلق برلن کے اجلاسوں میں یوروپی فوجی کمیشن نے حصہ لیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں