.

حدیث مبارکہ کو موسیقی ویڈیو میں استعمال کرنے پر ریحانہ نے معافی مانگ لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بارباڈوس سے تعلق رکھنے والی معروف پاپ آرٹسسٹ ریحانہ [رابن ریحانہ فینٹی] نے مسلمانوں سے اپنی ایک اشتہاری ویڈیو میں حدیث مبارکہ کے الفاظ کو موسیقی میں استعمال کرنے پر معافی مانگ لی ہے۔ زیر جامہ میں ملبوس آرٹسسٹ کی جانب سے حدیث کے الفاظ کو اشتہاری ویڈیو میں استعمال کرنے پر مسلمانوں کی جانب کڑی تنقید جا رہی ہے۔

گانے پر مبنی ویڈیو میں ’’روز قیامت‘‘ سے متعلق حدیث نبوی ﷺ کے عربی الفاظ استعمال کیے گئے تھے۔

ریحانہ نے مسلمان برادری کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے انسٹاگرام پر ان کے “Savage X Fenty Show” کی تشہیری ویڈیو میں ’’غیر ارادی طور پر سرزد ہونے والی فاش غلطی‘‘ کی نشاندہی کی، جس نے مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچی۔

انھوں نے اپنی ’’بد احتیاطی کی مظہر‘‘ غلطی پر معافی مانگتے ہوئے اعتراف کیا کہ وہ کسی مذہب یا اللہ کی شان میں کسی قسم کی گستاخی کا ارتکاب نہیں کرنا چاہتیں، اس لیے ہمارے پراجیکٹ میں حدیث پر مبنی گیت کا استعمال ’’مکمل غیر ذمہ داری‘‘ کا ثبوت تھا۔

گذشتہ ہفتے زیر جاموں کی تشہیر پر مبنی ایک شو میں ’’ڈوم‘‘ نامی گیت میں حدیث مبارکہ ﷺ کی ایک سطر استعمال کی گئی، حدیث کے الفاظ کے جلو میں پروگرام میں شامل خواتین ماڈلز فلور پر رقص کرتی دیکھی جا سکتی ہیں۔

ویڈیو کے پروڈیوسر کیوکو کلوی نے گیت میں استعمال ہونے والے الفاظ کی مناسب تحقیق نہ کرنے کی مکمل ذمہ داری قبول کی ہے۔ انھوں نے بتایا کہ ہماری کوشش ہے کہ تمام سٹریمنگ پلیٹ فارمز سے متنازع گیت فی الفور ہٹایا جائے۔ کلوی نے اپنی ٹویٹ میں اعتراف کیا کہ انہیں معلوم نہیں تھا کہ گیت کا متن ’’اسلامی حدیث‘‘ سے لیا گیا ہے۔