.

کرونا کی روک تھام کے لیے سعودی عرب کی کوششوں پر عالمی ادارہ صحت کی ستائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس ادہانوم گیبریسس نے کرونا وائرس کی روک تھام کے لیے ادارے کی کوششوں کی سپورٹ کے لیے سعودی عرب کی جانب سے مالی مدد پیش کرنے کے اعلان پر سعودی فرماں روا شاہ سلمان بن عبدالعزیز، ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان اور سعودی عوام کے لیے ممنونیت کا اظہار کیا ہے۔

گیبریسس نے ٹویٹر پر سرکاری اکاؤنٹ پر کہا "عالمی ادارہ صحت کے لیے 9 کروڑ ڈالر کی اضافی معاونت پیش کرنے ، کرونا کی وبا کے نتیجے میں انسانیت کو درپیش خطرات کا مل کر مقابلہ کرنے اور صحت کے کمزور نظام کے حامل ممالک کے واسطے ہماری سپورٹ کو مضبوط بنانے پر مملکت سعودی عرب کا بے حد شکریہ"۔

اس سے قبل کرونا وائرس کے آغاز کے دنوں میں سعودی عرب کی جانب سے عالمی ادارہ صحت کی سپورٹ پر گیبریسس نے اپنی ٹویٹ میں کہا تھا "میں عالمی ادارہ صحت کے لیے 1 کروڑ ڈالر کی مالی سپورٹ پیش کرنے پر خادم حرمین شریفین ، سعودی ولی عہد اور سعودی عوام کے لیے نہایت ممنون ہوں .. یہ رقم کوویڈ-19 کے پھیلاؤ پر روک لگانے اور صحت کے کمزور نظام والے ممالک کی سپورٹ کے واسطے فوری تدابیر میں استعمال کی جائے گی"۔

یاد رہے کہ ایک کروڑ ڈالر کی مذکورہ مالی سپورٹ رواں سال مارچ میں عالمی ادارہ صحت کی جانب سے عالمی سطح پر کی گئی اپیل کے جواب میں پیش کی گئی تھی۔

واضح رہے کہ دسمبر 2019ء میں چین میں کرونا وائرس کے نمودار ہونے کے بعد سے اب تک دنیا بھر میں 35,736,102 افراد اس وبائی مرض سے متاثر ہو چکے ہیں۔ ان میں 26,894,740، افراد صحت یاب ہو چکے ہیں جب کہ 1,046,546 موت کا شکار ہوئے۔