.

آرمینیا کی فضائی حدود کے اندر 2 ڈرون طیارے تباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

آرمینیا کی وزارت دفاع کے اعلان کے مطابق آرمینیا کی فضائی حدود کے اندر دو ڈرون طیاروں کو مار گرایا گیا۔ اس دوران کیبان شہر میں خطرے کے سائرن بجائے جاتے رہے۔

وزارت دفاع کی ترجمان شوشان استیبانیان نے جمعے کی شام فیس بک پر اپنی پوسٹ میں کہا کہ "جمہوریہ آرمینیا کی فضائی حدود میں دو ڈرون طیاروں کا پتہ چلایا گیا۔ اس سلسلے میں مناسب اقدامات کیے جا رہے ہیں"۔

ادھر آرمینیا کی ہنگامی حالات کی وزارت کے مطابق ملک کے جنوب میں ناگورنو قراباغ کے قریب واقع شہر کیبان میں میں خطرے کے سائرن بجائے گئے۔

کاراباخ میں وزارت دفاع کے اعلان کے مطابق مزید 29 فوجی ہلاک ہو گئے ہیں۔ اس طرح 27 ستمبر کو آذربائیجان کی فورسز کے ساتھ لڑائی شروع ہونے کے بعد سے اب تک آرمینیا کے 633 فوجی مارے جا چکے ہیں۔

یاد رہے کہ 1990ء کی دہائی کے دوران سوویت یونین کے ٹوٹنے کے ساتھ ہی آرمینیائی اکثریت کا حامل علاقہ ناگورنو قراباغ، آذربائیجان سے علاحدہ ہو گیا تھا۔ اس کے نتیجے میں ہونے والی جنگ میں 30 ہزار افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے تھے۔

گذشتہ ماہ 27 ستمبر کو شروع ہونے والی شدید جھڑپیں 1994ء میں جنگ بندی کے بعد سامنے آنے سنگین ترین معرکہ آرائی ہے۔ غیر حتمی اعداد و شمار کے مطابق اب تک حالیہ لڑائی میں 700 سے زیادہ افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

گذشتہ ہفتے روس کی سرپرستی میں متحارب فریقین کے درمیان فائر بندی ہوئی تھی تاہم جلد ہی اس کو خلاف ورزیوں سے توڑ دیا گیا۔