.

عرب اتحاد نے سعودی عرب کی طرف آنے والا یمنی حوثیوں کاڈرون تباہ کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عرب اتحاد نے یمن سے ایران کے حمایت یافتہ حوثی باغیوں کے سعودی عرب کی جانب چھوڑے گئے بارود سے لدے ایک ڈرون کو تباہ کردیا ہے۔

عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے ہفتے کے روز اس ڈرون کو تباہ کرنے کی اطلاع دی ہے۔اس ناکام ڈرون حملے سے ایک روز قبل بھی عرب اتحاد نے حوثی ملیشیا کے سعودی عرب کی جانب داغے گئے دو مسلح ڈرونز کو تباہ کردیا تھا۔

کرنل ترکی المالکی نے جمعہ کو بتایا تھا کہ ان میں سے ایک ڈرون یمن کی سرحد کے نزدیک واقع سعودی عرب کے جنوبی علاقے کی جانب داغا گیا تھا اور اس سے جان بوجھ کر شہری علاقوں کو نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی تھی۔

ایران کے حمایت یافتہ حوثی دہشت گرد گروپ نے حالیہ ہفتوں کے دوران میں سعودی عرب کے جنوبی شہروں اور یمن میں اپنے کنٹرول سے باہر قانونی حکومت کی عمل داری والے علاقوں میں متعدد ڈرون اور میزائل حملے کیے ہیں جبکہ عرب اتحاد نے ان میں سے بیشتر کو ناکارہ بنا دیا ہےیا وہ ویران جگہوں پر گرے ہیں۔

ایران حوثیوں کو ڈرونز سمیت اسلحہ اورمالی امداد مہیا کررہا ہے۔حوثیوں کا یمن کے دارالحکومت صنعاء اور شمالی شہروں پر قبضہ کررکھا ہے جبکہ صدر عبد ربہ منصور ہادی کے زیر قیادت حکومت نے جنوبی شہر عدن میں اپنے دفاتر قائم کررکھے ہیں اور عرب اتحاد کی مدد سے ملک کے بیشتر علاقوں میں اس کی عمل داری قائم ہوچکی ہے۔