.

نیدرلینڈز:ہیگ میں سعودی سفارت خانے پر فائرنگ کرنے والا مشتبہ ملزم گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ڈچ پولیس نے ہیگ میں سعودی عرب کے سفارت خانے پر فائرنگ کے الزام میں ایک مشتبہ ملزم کو گرفتار کر لیاہے۔فائرنگ سے عمارت کو معمولی نقصان پہنچا ہے لیکن اس سے کوئی شخص زخمی نہیں ہوا ہے۔

ہیگ پولیس نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’پولیس نے جمعرات کی دوپہر سوا دوبجے کے قریب زویترمیر سے ایک شخص کو سعودی عرب کے سفارت خانے پر فائرنگ کے واقعے میں ملوّث ہونے کے الزام میں گرفتار کر لیا ہے۔‘‘

بیان کے مطابق :’’جمعرات کو علی الصباح ہیگ کے علاقے کوننگنگراخت میں واقع سعودی سفارت خانے کی عمارت پر متعدد گولیاں چلائی گئی تھیں۔پولیس نے فوری طور پر جامع تحقیقات شروع کردی تھی اور ایک بڑی تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی تھی۔اس کے نتیجے میں زویترمیر میں واقع ایک مکان سے مشتبہ شخص کو گرفتار کر لیا گیا ہے اوراس سے اب تحقیقات کی جائے گی۔ پولیس افسروں نے مزید تحقیقات کے لیے ایک مسافر کار بھی قبضے میں لے لی ہے۔‘‘

سعودی حکومت نے اس بزدلانہ حکومت کی مذمت کی ہے اور ڈچ حکام کا ان کے فوری ردعمل پر شکریہ ادا کیا ہے۔نیدرلینڈز کی وزارت خارجہ نے کہا ہے کہ وہ اس واقعہ کو بڑی سنجیدگی سے لے رہی ہے اور سعودی حکام سے قریبی رابطے میں ہے۔

قبل ازیں سعودی سفارت خانے نے ٹویٹر پر ایک بیان میں بتایا تھا کہ ’’فائرنگ کے رونما ہوتے ہی ایمبیسی کے سکیورٹی اہلکاروں نے ڈچ سکیورٹی حکام کو مطلع کردیا تھا۔اس کے بعد ہیگ میں سعودی سفارت خانے کی جانب جانے والی شاہراہ کو بند کردیا گیا اور اضافی سکیورٹی اقدامات کیے گئے ہیں۔‘‘

سفارت خانہ نے سعودی پریس ایجنسی کی جانب سے جاری کردہ بیان میں مزید بتایا کہ اس کا کوئی ملازم واقعے میں زخمی نہیں ہوا ہے۔اس نے بھی ڈچ حکام کا واقعے کے فوری بعد ردعمل پر شکریہ ادا کیا ہے اور نیدرلینڈز میں مقیم تمام سعودی شہریوں کو محتاط رہنے کی ہدایت کی ہے۔

ڈچ پولیس نے بتایا تھا کہ سعودی سفارت خانے کی عمارت پرمتعدد گولیاں چلائی گئی ہیں لیکن اس واقعے میں کوئی شخص زخمی نہیں ہوا۔ترجمان اسٹیون وان سانتین نے بتایا کہ پولیس کو علی الصباح چھے بجے کے قریب الرٹ کیا گیا تھا اور بتایا گیا تھا کہ سفارت خانے کی عمارت پر فائرنگ کی جارہی ہے۔پولیس افسروں نے بعد میں عمارت کے باہر سے گولیوں کے متعدد خول اکٹھے کیے تھے۔