برطانیہ میں زیر تعلیم سعودی طالب علم کا علوم حشرات کانفرنس میں اعزاز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

برطانیہ میں لیورپول یونیورسٹی میں ڈاکٹریٹ کے سعودی طالب علم عبادی محمد مشلوی نے سال 2020ء کے لیے American Entomologists Association کی سالانہ کانفرنس میں بہترین سائنٹفک پوسٹر میں دنیا بھر میں دوسری پوزیشن حاصل کر لی۔ پوسٹر میں اُن جینیاتی تغیرات کا انکشاف کیا گیا ہے جو سعودی عرب کے صوبے جازان میں ڈینگی مچھروں کی کیڑے مار دواؤں کے سامنے مزاحمت کے ذمے دار ہیں۔ سعودی طالب علم نے یہ پوسٹر اپنے ڈاکٹریٹ کے مقالے کی تحقیق کے ضمن میں پیش کیا ہے۔

عبادی محمد مشلوی جازان یونیورسٹی سے حاصل اسکالر شپ پر برطانیہ میں زیر تعلیم ہیں۔ عبادی نے واضح کیا کہ ان کی تحقیق کے نتیجے میں جازان کے مچھروں میں تین جینیاتی تغیرات سامنے آئے۔ ان کے نام V1016G ،S989P اورF1534C ہیں۔ یہ تینوں مشرقی ایشیا (مثلا بھارت، تھائی لینڈ اور تائیوان) اور جنوبی امریکا کے بعض ممالک (مثلا برازیل اور میکسیکو) میں پھیلے ہوئے ہیں۔

عبادی کے مطابق یہ پہلی مرتبہ ہے کہ تین ہم نسبت جینیاتی تغیرات کا انکشاف کیا گیا ہے جو اس بات کا پتہ دیتے ہیں کہ جازان صوبے میں کیڑے مار مواد کے مقابل مزاحمت اعلی ترین سطح پر ہے۔

سعودی طالب علم نے بتایا کہ تحقیقی مطالعے سے موجودہ کیڑے مار دواؤں کے استعمال پر روک لگانے یا اس کے استعمال میں کمی لانے اور دوسرے کیڑے مار مواد سے تبدیل کرنے کی اہمیت اجاگر ہوتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں