.

اسرائیلی وزیراعظم کی مراکشی فرمانروا سے فون پر بات چیت، دورہ اسرائیل کی دعوت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیلی وزیر اعظم بنیامن نیتن یاہو کے دفتر نے بتایا کہ وزیراعظم نے جمعہ کے روز مراکش کے فرمانروا محمد ششم سے ٹیلفیون پر بات کی اور انہیں اسرائیل کے دورے کی دعوت دی۔

اسرائیلی وزیراعظم کے دفتر سے جاری بیان میں مزید کہا گیا کہ دونوں رہ نماؤں نے دو طرفہ امن معاہدے کی بنیاد پر آگے بڑھنے پر اتفاق کیا۔ حال ہی میں امریکا کی کوششوں سے مراکش نے اسرائیل کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے کا فیصلہ کیا تھا۔

نیتن یاھو نے اس ہفتے اسرائیل کے ایک سرکاری وفد کے دورہ مراکش کے دوران رباط کی میزبانی پر مراکشی بادشاہ کا شکریہ ادا کیا۔

مراکشی شاہی دربار نے ایک بیان میں کہا ہے کہ شاہ محمد ششم نے مراکشی یہودیوں اور شاہی اسٹیبلشمنٹ کے مابین قریبی تعلقات کو اجاگر کیا۔

بادشاہ نے اسرائیل کے ساتھ تعلقات کی بحالی کا خیر مقدم کیا لیکن انہوں نے کہا کہ فلسطین کے معاملے پر ان کے ملک کا موقف تبدیل نہیں ہوا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ دس دسمبر کو مراکش نے اسرائیل کے ساتھ اپنے تعلقات بحال کرنے کا اعلان کیا تھا۔ منگل کے روز اسرائیل اور امریکا ایک مشترکہ وفد مراکش پہنچا تھا۔ اسرائیلی وف کی قیادت ایک مراکشی نژاد یہودی میئربن شبات نے کی۔