.

سعودی عرب میں تیل اورگیس کے چار نئے ذخائر کی دریافت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی آرامکو نے مملکت میں تیل اور گیس کے چار نئے ذخائر دریافت کرلیے ہیں۔

سعودی عرب کے وزیر توانائی شہزادہ عبدالعزیز بن سلمان نے اتوار کو ان ذخائر کی دریافت کا اعلان کیا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق ظہران کے شمال مغرب میں الریش آئیل فیلڈ سے غیر روایتی تیل کا ذخیرہ دریافت ہوا ہے۔اس سے تیل کی یومیہ 3850 بیرل پیداوار متوقع ہے۔

ظہران سعودی عرب کے مشرقی صوبہ میں واقع ہے اور یہ تیل کی صنعت کا بڑا انتظامی مرکز ہے۔سعودی وزیر توانائی کہنا ہے کہ الریش آئیل فیلڈ کی دریافت بڑی اہمیت کی حامل ہے کیونکہ اس سے عرب تیل کی اضافی پیداوار حاصل کی جاسکے گی۔

منحاذ کنویں میں واقع السراح ذخائر سے بھی غیر روایتی تیل دریافت ہوا ہے۔یہ ظہران ہی میں غوار آئیل فیلڈ کے جنوب مغرب میں واقع ہے۔

سعودی آرامکو نے عراق کی سرحد کے نزدیک واقع شہر رفح کے شمال مغرب میں الاجرامیہ آئیل فیلڈ سے بھی تیل دریافت ہونے کی اطلاع دی ہے۔

ایس پی اے نے شہزادہ عبدالعزیز کے بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ سعودی آرامکو نئے دریافت شدہ کنووں کے حجم اور ان سے تیل کی یومیہ پیداوار کے تعیّن کے لیے کام کررہی ہے۔ان ذخائر کی دریافت سے اس امرکی بھی عکاسی ہوتی ہے کہ سعودی میں تیل اورگیس کے وافر ذخائر موجود ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں