.

افریقی ملک مالی میں جنگجوؤں کے حملے میں اقوام متحدہ کے 20امن فوجی زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

افریقی ملک مالی کے وسطی علاقے میں اقوام متحدہ کے امن دستوں کے ایک اڈے پر جنگجوؤں کے حملے میں 20 فوجی زخمی ہوگئے ہیں۔

اقوام متحدہ کے ترجمان اولیوئیر سالگڈو نے بتایا ہے کہ جنگجوؤں نے مالی کی وسطی ریاست ساحل میں واقع گاؤں کیرینا کے نزدیک امن دستوں کے ایک عارضی اڈے پر حملہ کیا ہے اور اس کو براہ راست اور بالواسطہ فائرنگ سے نشانہ بنایا ہے۔

مالی میں اقوام متحدہ کے منوسما مشن کے تحت 13 ہزار امن فوجی تعینات ہیں۔مالی میں 2012ء سے شورش جاری ہے۔ تب جہادیوں نے ملک کے شمالی علاقوں میں مزاحمتی سرگرمیوں کا آغاز کیا تھا لیکن بعد میں انھوں نے ملک کے وسطی علاقوں اور ہمسایہ ممالک بورکینا فاسو اور نیجر میں بھی کارروائیاں شروع کردی تھیں۔

گذشتہ قریباً ایک عشرے کے دوران میں مالی میں جنگی کارروائیوں میں ہزاروں فوجی اور شہری ہلاک ہوچکے ہیں اورشورش زدہ علاقوں سے ہزاروں افراد اپنے گھربار چھوڑ کر دوسرے علاقوں کی جانب چلے گئے ہیں۔