.

سعودی عرب:کووِڈ-19کاشکار،مگرتن درست افرادکو ویکسین کی صرف ایک خوراک کافی ہوگی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی قومی سائنسی کمیٹی برائے متعدی امراض نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ کووِڈ-19 کے مرض میں مبتلا رہنے والے مریضوں کے لیے ویکسین کی صرف ایک خوراک کافی ہوگی۔

وزارتِ صحت کا کہنا ہے کہ ایسے افراد کو صحت یاب ہونے کے چھے ماہ کے بعد کووِڈ-19 کی ویکسین کا صرف ایک ٹیکا لگایا جائے گا کیونکہ اس عرصے کے دوران میں ان کی قوتِ مدافعت مضبوط ہوچکی ہوگی۔

سعودی وزارت صحت نے مملکت بھر میں جمعرات کو کروناوائرس کی ویکسین لگانے کی مہم کا دوسرا مرحلہ شروع کیا ہے۔اس نے کہا ہے کہ جولوگ ویکسین لگوانا چاہتے ہیں، وہ صحتی ایپ کے ذریعے اپنے ناموں کا اندراج کراسکتے ہیں۔

سعودی وزیر صحت ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ ’’ہم نے مملکت کے تمام علاقوں میں ویکسین لگانے کی مہم شروع کردی ہے۔میں ہرکسی کو دعوت دیتا ہوں کہ صحتی ایپ پر ویکسین لگوانے کے لیے اپنے نام کا اندراج کرائیں۔‘‘

انھوں نے کہا کہ ’’اس مرحلے پران لوگوں کو ترجیح دی جائے گی جو ویکسین لگوانے والے منظورشدہ زمروں میں شامل ہوں گے اور سب سے پہلے اپنے ناموں کا اندراج کرائیں گے۔‘‘

سعودی عرب میں کرونا وائرس کی ویکسی نیشن مہم کے دوسرے مرحلے میں درج ذیل گروپوں کو ٹیکے لگائے جارہے ہیں:

50 سال سے زیادہ عمر کے شہری ، مکین اور شعبہ صحت سے وابستہ افراد۔

جو لوگ درج ذیل میں کسی ایک دائمی مرض میں مبتلا ہیں: دمہ ، ذیابطیس ،گردے کے دائمی مریض ، دل کے عارضے میں مبتلا افراد ،فعال سرطان کے مریض اورموٹاپے کا شکار افراد۔

دریں اثناء سعودی وزارتِ صحت نے گذشتہ 24 گھنٹے میں کروناوائرس کے 327 نئے کیسوں کی اطلاع دی ہے۔کووِڈ-19 کے 371 مریض صحت یاب ہوگئے ہیں جبکہ پانچ مریض وفات پاگئے ہیں۔سعودی عرب میں اب تک 374029 کیسوں کی تشخیص ہوئی ہے۔ان میں سے 6450 مریض وفات پاچکے ہیں۔