.

دنیا بھر میں سیکڑوں ہوٹل کے مالک نے کرونا کے باعث خودکشی کر لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

دنیا بھر میں 610 ہوٹلوں کے مالک امریکی کاروباری شخصیت نے کرونا سے صحت یابی کے بعد پیدا ہونے والے طبی مسائل سے تنگ آکر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔

عالمی خبررساں ادارے کے مطابق ٹیکساس روڈ ہاؤس کے بانی 65 سالہ کینٹ ٹیلر اپنی رہائش گاہ میں مردہ حالت میں پائے گئے۔ ابتدائی تحقیقات میں ان کی موت وجہ خودکشی بتائی گئی ہے۔

کینٹ ٹیلر کے اہل خانہ نے کمپنی کی جانب سے جاری بیان میں خودکشی کے باعث ہلاکت کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ وہ کانوں میں سیٹیاں بجنے سے پریشان تھے اور ایسے فوجی مریضوں پر ہونے والی طبی تحقیق کے لیے مالی امداد کا بھی وعدہ کیا تھا۔

ارب پتی کینٹ ٹیلر کے 10 ممالک میں 610 سے زائد ہوٹلز تھے اور حال ہی میں کرونا سے صحت یاب ہوئے تھے تاہم انہیں طبی مسائل جیسے کانوں میں آوازوں کے گونجنے جیسی شکایات کا سامنا تھا۔

ان طبی مسائل کے لیے وہ علاج کرا رہے تھے لیکن یہ مسائل حل ہونے کے بجائے بڑھتے گئے جس سے پریشان ہوکر کینٹ ٹیلر نے اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔ وہ تنہائی کا بھی شکار تھے۔