.

 ماؤ علاحدگی پسندوں سے جھڑپ میں 25 بھارتی فوجی ہلاک

 گوریلوں نے بھارتی فوجیوں کی لاشوں کے ڈھیر لگا دئیے، 35 فوجی زخمی، 22 لاپتا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بھارت کی وسطی ریاست چھتیس گڑھ میں ماؤ علاحدگی پسندوں کے ساتھ جھڑپ میں اب تک 25 بھارتی فوجی ہلاک اور 35 زخمی ہوئے جبکہ 22 لاپتا فوجیوں کی تلاش جاری ہے۔ خدشہ ہے کہ وہ بھی مارے جاچکے ہیں۔

غیر ملکی ذرائع ابلاغ کے مطابق بے جاپور کے علاقے میں ماؤ علاحدگی پسندوں کا اجلاس جاری تھا کہ بھارتی فوج پیرا ملٹری فورسز اور پولیس کمانڈوز بھرپور حملہ کر دیا لیکن وہ صرف 2 جنگجوئوں کو نشانہ بنا سکے جواب میں ماؤ گوریلوں نے بھارتی فوجیوں کی لاشوں کے ڈھیر لگا دئیے۔ زخمی اہلکاروں کو ہیلی کاپٹر کے ذریعے ریاست دارالحکومت کے ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں اکثر کی حالت تشویش ناک ہے۔

چھتیس گڑھ کے آئی جی پولیس کے مطابق یہ جھڑپ ہفتہ کے روز ہوئی تھی اور اس وقت ہمیں 5 لاشیں موصول ہوئی تھیں لیکن گزشتہ رات اور اتوار کے روز مزید 20 لاشیں ملی ہیں جبکہ 22 فوجی لاپتا ہیں جن کی تلاش جاری ہے۔

انھوں نے خدشہ ظاہر کیا کہ ہلاکتوں میں اضافہ ہو سکتا ہے اور لاپتا فوجی بھی مار دئیے گئے ہوں۔ چھتیس گڑھ میں گزشتہ 2 عشروں سے جاری ماؤ نواز علاحدگی پسندوں کی مسلح جھڑپوں کے دوران اب تک ساڑھے تین ہزار کے قریب افراد مارے جا چکے ہیں جن میں سے اکثریت بھارتی فوجیوں کی ہے۔

ماؤ علاحدگی پسندوں کا کہنا ہے کہ وہ اپنے وطن کی آزادی ، باعزت روزگار اور قبائلی عوام کے حقوق کی جنگ لڑ رہے ہیں۔