مصر کی عدالتی تاریخ کا انوکھا واقعہ، جج نے اپنے ہی خلاف سزا کا فیصلہ سنا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

دوسروں کے خلاف کیسز کے فیصلے سنانا تو ججوں کا کام ہے مگر کوئی جج اپنے ہی خلاف فیصلہ سناتے ہوئے خود کو جرمانہ کی سزا سنائے یہ حیران کن ہے۔ مگر مصر میں ایک عدالت کے جج نے خود کو سزا دے کر سب کو حیران کردیا۔

مصر کی عدالتی تاریخ میں‌یہ اپنی نوعیت کا انوکھا ترین واقعہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ کونسل کے وائس چیئرمین جسٹس محسن کلوب نے ایک کیس کی سماعت کے دوران اپنے موبائل فون کی گھنٹی بجنےپر خود کو جرمانہ کی سزا سنائی۔

مصری ذرائع ابلاغ کے مطابق اسوان میں قائم انتظامی عدالت کے جج نے خود کو 500 مصری پاونڈ جرمانہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک مقدمے کی سماعت کے دوران ان کے موبائل فون کی گھنٹی بج اٹھی جس کے نتیجے میں ان کی توجہ مقدمہ سے ہٹ گئی۔ انہوں نے فورا خود کو اس کا قصور وار قرار دیتے ہوئے پانچ سو پاونڈ کا جرمانہ کر دیا۔

جسٹس محسن کلوب کے اس اقدام پر دوسرے جج صاحبان، وکلا اور عام شہری بھی حیران رہ گئے کہ ایک جج مقدمات میں سماعت میں اس حد تک سنجیدہ ہے کہ اپنے موبائل فون کی گھنٹی بجنے پر خود ہی کو مستوجب سزا قرار دیتا ہے۔

خیال رہے کہ جسٹس کلوب دوسرے جج حضرات اور وکلا کو مقدمات کی سماعت کےدوران اپنے فون بند رکھنے کی تاکید کرتے رہتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں