.

وڈیو: حوثیوں کی گاڑی نے ٹکر مار کر دو بچوں کو ہوا میں اڑا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں شہریوں کے خلاف حوثی ملیشیا کے جرائم کا سلسلہ جاری ہے۔ تازہ ترین واقعے میں باغی ملیشیا کے ارکان کی ایک عسکری گاڑی نے جمعرات کے روز تعز کے جنوب مشرق میں دو بچوں کو زور دار ٹکر مار دی۔ اس کے نتیجے میں دونوں بچے موقع پر ہی دم توڑ گئے۔

مقام ذرائع کے مطابق سڑک پر انتہائی تیز رفتاری سے سفر کرنے والی حوثیوں کی عسکری گاڑی نے سامنے سے آنے والی موٹر سائیکل کو ٹکر مار کر فضا میں اڑا دیا۔ موٹر سائیکل پر دو بچے محمد الجنيد اور وجدی السروری سوار تھے۔

رواں ماہ دس اپریل کو تعز کے مغرب میں واقع علاقے ہجدہ میں حوثیوں کی عسکری گاڑی نے دو یمنی شہریوں کو کچل دیا۔ اس کے نتیجے میں کم از کم ایک شخص جاں بحق اور دوسرا شدید زخمی ہو گیا۔

ایران نواز حوثی ملیشیا کے زیر کنٹرول یمنی علاقوں میں شہریوں کو کچلنے کے جرائم کا ارتکاب ہوتا رہتا ہے۔