.

'یو این' ہائی کمشنر کا حماس اور اسرائیل پر حملے روکنے کا مطالبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق نے غزہ میں اسرائیل اور حماس پر زور دیا ہے کہ وہ دونوں طرف سے تناؤ اور کشیدگی کم کریں۔

مشیل بیچلیٹ نے ہفتہ کو جنیوا میں جاری ایک بیان میں کہا کہ تناؤ اور کشیدگی میں کمی کے بجائے حماس اور اسرائیل کی قیادت ایسے اشتعال انگیز بیانات دے رہی ہے جس سے امن کے بجائے کشیدگی بڑھ رہی ہے۔

بچیلیٹ کا بیان غزہ شہر میں اسرائیلی فضائی حملے میں ایک کثیر منزلہ عمارت کو تباہ کرنے سے کچھ ہی دیر پہلے جاری کیا گیا تھا۔ اس عمارت میں خبر رساں ادارے 'ایسوسی ایٹڈ پریس' اور دیگر ذرائع ابلاغ کے دفاتر تھے۔ بیان میں متنبہ کیا گیا ہے کہ فلسطینی مسلح گروہوں کی طرف سے اسرائیل میں آبادی پر اندھا دھند راکٹ حملےبین الاقوامی انسانی قانون کی صریح خلاف ورزی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ غزہ میں اسرائیلی فوج نے غزہ کی پٹی میں شہری اہداف کو نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ شہری آبادی پر اسرائیلی حملے بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔
خیال رہے کہ گذشتہ سوموار سے غزہ کی پٹی پر جاری اسرائیل کی وحشیانہ کارروائی میں اب تک145 فلسطینئ شہید اور 1050 زخمی ہوچکے ہیں۔ شہدا میں 39 کم سب بچے بھی شامل ہیں۔40 زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے۔