.

سعودی عرب میں یواے ای اورامریکا سمیت11ممالک کے مسافروں کو داخلے کی اجازت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب نے متحدہ عرب امارات اور امریکا سمیت گیارہ ممالک سے تعلق رکھنے والے مسافروں کو 30مئی سے داخلے کی اجازت دے دی ہے۔ان ممالک میں پاکستان شامل نہیں ہے۔

سعودی عرب نے قبل ازیں ان ممالک سے تعلق رکھنے والے مسافروں پر کرونا وائرس کی وَبا پھیلنے کے خدشے کے پیش نظر داخلے پر پابندی عاید کردی تھی۔سعودی پریس ایجنسی کے مطابق جن ممالک سے تعلق رکھنے والے مسافروں کو اتوار سے مملکت میں داخل ہونے کی اجازت ہوگی،ان میں امریکا اور یوے اے ای کے علاوہ جرمنی ،آئیرلینڈ ، اٹلی،برطانیہ، پرتگال،سویڈن ،سوئٹزرلینڈ ،فرانس اور جاپان شامل ہیں۔

سعودی وزارت داخلہ کے ایک ذریعے نے بتایا ہے کہ ان ممالک سے تعلق رکھنے والے مسافروں کے مملکت میں داخلے پر عاید پابندی ختم کرنے کا فیصلہ عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او)کی فراہم کردہ معلومات کی روشنی میں کیا گیاہے۔

ڈبلیوایچ اونے کہا ہے کہ ان ممالک نے کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے مؤثراقدامات کیے ہیں۔تاہم مذکورہ ممالک سے تعلق رکھنے والے مسافروں کو سعودی عرب میں آمد کے بعد قرنطین میں رہنا ہوگا۔

سعودی عرب نے 3فروری کو بیس ممالک سے تعلق رکھنے والے مسافروں کے داخلے پر پابندی عاید کردی تھی اور صرف ان ممالک میں مقیم سعودی شہریوں ، سفارت کاروں ، طبّی عملہ اور ان کے خاندانوں کو ملک میں لوٹنے کی اجازت دی تھی۔

سعودی حکومت نے 17 مئی کو اپنے شہریوں کو بیرون ملک سفر کی اجازت دے دی تھی اور اپنی برّی ، بحری اور فضائی سرحدیں کھول دی تھیں۔

سعودی عرب کی جنرل انٹرٹینمنٹ اتھارٹی نے گذشتہ جمعرات کو کووِڈ-19 کی ویکسین لگوانے والے افراد کے لیے تفریحی سرگرمیاں بحال کرنے کا اعلان کیا تھا۔