.
یمن اور حوثی

عرب اتحاد یمن میں امن عمل کی بحالی کے لیے سیاسی بنیاد فراہم کرنا چاہتا ہے: ترجمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحاد نے کہا ہے کہ اس نے یمن کے دارالحکومت صنعاء یا کسی اور شہر کے نواح میں حملے بند کردیے ہیں کیونکہ وہ یمن میں جاری بحران کے پُرامن تصفیے کے لیے سیاسی بنیاد فراہم کرنا چاہتا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی (ایس پی اے) کے مطابق عرب اتحاد کے ترجمان بریگیڈئیر جنرل ترکی المالکی نے جمعرات کے روز یمنی دارالحکومت کے نزدیک ایران کے حمایت یافتہ حوثیوں کے بکتربند ڈویژن پر حملے سے متعلق میڈیا رپورٹس منظرعام پر آنے کے بعد یہ وضاحتی بیان جاری کیا ہے۔

ترجمان ترکی المالکی نے ان رپورٹس کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’’گذشتہ کچھ عرصے کے دوران میں صنعاء کے نواح میں یا یمن کے کسی اور شہر میں کوئی فوجی کارروائی نہیں کی گئی ہے۔اس کا مقصد امن عمل کی راہ ہموار کرنا ہے۔‘‘