.

انسانیت کے خلاف جرائم ، ایمنیسٹی انٹرنیشنل کا نئے ایرانی صدر سے تحقیقات کا مطالبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

انسانی حقوق کی بین الاقوامی تنظیم ایمنیسٹی انٹرنیشنل نے مطالبہ کیا ہے کہ انسانیت کے خلاف جرائم کا ارتکاب کرنے پر ایران کے نئے صدر ابراہیم رئیسی کے ساتھ تحقیقات کی جائیں۔

تنظیم کا مزید کہنا ہے کہ ایرانی میں صدارتی انتخابات کا اجرا گھٹن کی فضاؤں میں ہوا ہے۔

ایرانی سرکاری ٹی وی کے اعلان کے مطابق ابراہیم رئیسی نے کُل ووٹوں میں سے 62% ووٹ حاصل کیے ہیں جن کی تعداد 1.78 کروڑ بنتی ہے۔ ملک میں رجسٹرڈ کُل 5.9 کروڑ ووٹرز میں سے 2.8 کروڑ نے اپنا حق رائے دہی استعمال کیا۔

ایمنیسٹی انٹرنیشنل نے مطالبہ کیا ہے کہ "ابراہیم رئیسی کی جانب سے ایران میں مرتکب جرائم کے شواہد اکٹھا کرنے کے لیے ایک غیر جانب دار میکانزم بنایا جائے"۔

تنظیم کے مطابق رئیسی نے ایران میں 2019ء کے احتجاجی مظاہروں کے دوران سیکڑوں خواتین اور بچوں کی ہلاکت کو سپورٹ کیا تھا۔ مزید یہ کہ عدلیہ کی سربراہی کی مدت میں رئیسی نے انسانی حقوق اور اقلیتوں کے حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں کیں۔