.

سعودی عرب:70 فی صد سے زیادہ بالغ آبادی کوکووِڈ-19 کی ویکسین کا ایک انجیکشن لگ چکا!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب نے اعلان کیا ہے کہ اب تک 70 فی صد سے زیادہ بالغ آبادی کو کووِڈ-19 کی ویکسین کا ایک ایک ٹیکا لگایا جا چکاہے۔سرکاری اعدادوشمار کے مطابق اب تک سعودی عرب میں ایک کروڑ 68 لاکھ سے زیادہ افراد کو کووِڈ-19 کی پہلی خوراک دی جاچکی ہے۔

سعودی وزارتِ صحت کا کہنا ہے کہ 50 سال یا اس سے زیادہ عمر کے افراد کو اب دوسری خوراک لگانے کی مہم جمعرات سے شروع کی جارہی ہے۔اس کے علاوہ جن افراد کو ابھی تک ویکسین کی پہلی خوراک نہیں لگی،انھیں یہ پہلا انجیکشن لگانے کا سلسلہ جاری رہے گا۔

اس سے قبل جنوری میں سعودی عرب نے دارالحکومت الریاض، جدہ، الدمام اور مدینہ منورہ میں واقع چار ویکسین مراکز میں کووِڈ-19 کی ویکسین کی دوسری خوراک کی تاریخوں کو ری شیڈول کیا تھا۔ اس وقت حکام کا کہنا تھا کہ دوسری خوراک لگانے میں تاخیرکی وجوہات ان کے اختیار میں نہیں تھیں۔

اس کی ایک بنیادی وجہ تو ویکسین تیار کرنے والی کمپنیوں کی جانب سے سعودی عرب اور دنیا کے دیگر ممالک کو ویکسین کی ترسیل میں مسلسل تاخیر بتائی گئی تھی۔

وزارت صحت کے مطابق اب الریاض، جدہ، الدمام اور مدینہ منورہ کے ویکسین مراکز میں کووِڈ-19 کی ویکسین کی دوسری خوراک لگانے کی تاریخوں کو ری شیڈول کردیا گیا ہے۔

دریں اثناء سعودی عرب کی قومی کمیٹی برائے متعدی امراض نے لوگوں کو اب کووِڈ-19 کی دو مختلف ویکسینوں کی پہلی اور دوسری خوراک لگانے کی حکمتِ عملی اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس وقت سعودی عرب سمیت دنیا کے بیشتر ملکوں میں لوگوں کو کووِڈ-19 کی کسی ایک ویکسین کی دونوں خوراکیں لگائی جارہی ہیں مگر اب حالیہ مطالعات کی روشنی میں سعودی کمیٹی نے اس حکمتِ عملی کو تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

سعودی وزارت صحت نے بتایا ہے کہ قومی کمیٹی برائے متعدی امراض نے یہ فیصلہ بین الاقوامی سائنسی مطالعات کی روشنی میں کیا ہے۔ان میں کووِڈ-19 کی دو مختلف ویکسینوں کو پہلی اور دوسری خوراک کے طور پرلگانے کے نتائج کا جائزہ لیا گیا ہے۔

ان کے نتائج سے ثابت ہوا ہے کہ کروناوائرس کا شکار ہونے سے بچنے کے لیے دومختلف ویکسینوں کی دو خوراکیں محفوظ اور مؤثرہیں اور اس طرح کسی دوسری ویکسین کی دوسری خوراک کے وہی مفید نتائج ہوسکتے ہیں جو ایک ہی ویکسین کی ایک فرد کو لگائی گئی دونوں خوراکوں کے ہوسکتے ہیں۔

اس وقت سعودی عرب بھرمیں قریباً چھے سو ویکسی نیشن مراکزکام کررہے ہیں۔وہاں شہریوں اور مکینوں کو کووِڈ-19 کی ویکسینیں مفت لگائی جارہی ہیں۔ویکسین لگوانے کے لیے سعودی شہری اور تارکِ وطن صحتی ایپ پر اپنے ناموں کا اندراج کرسکتے ہیں اور انھیں دستیاب ویکسینوں میں سے کسی ایک کے انجیکشن لگائے جارہے ہیں۔

وزارت صحت نے لوگوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ کروناوائرس سے محفوظ رہنے کے لیے ویکسین لگوائیں، بالخصوص جو افراد لوگوں کے ہجوم یااجتماعات میں اپنا زیادہ وقت گزارتے ہیں،انھیں ضرور ویکسین لگوانی چاہیے۔