.

الریاض:سعودی ولی عہد شہزادہ محمدبن سلمان سے ابوظبی کے ولی عہد کی ملاقات

اوپیک پلس ممالک کے درمیان تیل کا یومیہ پیداواری کوٹا بڑھانے سے متعلق سمجھوتاکے ایک روز بعد رابطہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ابوظبی کے ولی عہد شیخ محمد بن زاید آل نہیان نے الریاض میں سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے سوموار کے روز ملاقات کی ہے اور ان سے دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات کے بارے میں تبادلہ خیال کیا ہے۔

دونوں لیڈروں کے درمیان تیل برآمد کرنے والے ملکوں کی تنظیم اوپیک(اوپیک) اور غیر اوپیک ممالک کے ورچوئل اجلاس کے ایک روز بعد یہ ملاقات ہوئی ہے۔اس اجلاس میں سعودی عرب اور یواے ای کے درمیان تیل کی پیداوار کے کوٹے میں اضافے کے لیےسمجھوتا طے پاگیا ہے۔

یواے ای کے وزیرتوانائی سہیل بن محمد المزروئی نے اس اجلاس کے بعد ایک نیوز کانفرنس میں کہا کہ ہم اس سمجھوتے سے مطمئن اورخوش ہیں۔

اوپیک پلس نے مئی 2022ء سے یو اے ای ، سعودی عرب ، روس ، کویت اور عراق سمیت بعض ممالک کا تیل کی یومیہ پیداواری کوٹا بڑھانے سے اتفاق کیا ہے۔

اس سمجھوتے کے تحت یو اے ای مئی 2022ء سے تیل کی موجودہ معیاری پیداوار31 لاکھ 68 ہزار بیرل یومیہ کو بڑھاکر35 لاکھ بیرل یومیہ کرسکے گا۔سعودی عرب اور روس اس وقت ایک کروڑ 10 لاکھ بیرل یومیہ تیل پیدا کررہے ہیں، وہ اس میں مزید پانچ لاکھ بیرل یومیہ کا اضافہ کرسکیں گے۔