.

یمن کے لیے سعودی عرب کی طرف سے عطیہ کیے گئےتیل کی مالیت چارارب ڈالر متجاوز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے عبوری دارالحکومت عدن میں یمن کے لیے سعودی عرب کے تعمیر نو مشن کےڈپٹی ڈائریکٹر جنرل محمد الیحییٰ نے کہا ہے کہ مملکت سعودی عرب کی طرف سے یمن کو فراہم کی جانے والی تیل کی مصنوعات کی گرانٹ کی مجموعی مالیت 4 ارب ڈالر سے تجاوز کرگئی ہے۔

انہوں نے ان خیالات کا اظہار سعودی عرب کی طرف سے بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ یمنی حکومت کو فراہم کردہ تیل کی مفت گرانٹ کی نئی قسط کی وصولی کے موقعے پر کیا۔ سعودی عرب کی طرف سے تیل کی یہ کھیپ اتوار کے روز عدن میں الزیت بندرگاہ پر پہنچی۔

عدن کے لیے یہ تیسری کھیپ ہے جو ساحلی شہر میں بجلی گھروں کو چلانے کے لیے استعمال کی جائے گی۔ اس کھیپ میں 75،000 میٹرک ٹن ڈیزل لایا گیا ہے۔

امید کی جارہی ہے کہ اگلے چند روز کے دوران سعودی عرب سے ایک بحری جہاز کے ذریعے 40 ہزار ٹن ڈیزل عدن منتقل کیا جائے گا جس کے بعد مملکت کی طرف سے عدن حکومت کے لیے تیل کی تیسری کھیپ مکمل ہو جائے گی۔

مارچ میں سعودی عرب نے یمن کو تیل کا ذخیرہ دینے کا اعلان کیا جس میں 351،304 ٹن ڈیزل اور 909،591 پٹرول شامل ہے جس کی مالیت $ 422 ملین ڈالر ہے۔ یہ ایندھن ایک سال کے لیے80 بجلی گھروں کو چلانے کے لیے کافی ہوگا۔