.

شادی کے اشتہارات کے ذریعے خواتین کی توہین کرنے والی ویب سائٹس کے خلاف کارروائی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے پراسیکیوٹر جنرل کی طرف سے منگل کے روز سوشل میڈیا ویب سائٹس پر شادی اشتہارات کے ذریعے خواتین کی توہین سے متعلق معاملے کی تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے اس میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کا حکم جاری کیا گیا ہے۔

پراسیکیوٹر جنرل کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ دینی اقدار اور ریاستی قانون کی خلاف ورزی پر مبنی توہین آمیز اشتہارات اور خواتین کی اہانت کا کوئی بھی اقدام ناقابل قبول اور قابل مواخذہ ہے۔

سعودی عرب کے پراسیکیوٹر جنرل کے مانیٹرنگ سیل نے سوشل میڈیا پر بعض ایسے اکاؤنٹس کا پتا چلایا ہے جن پر خواتین کی شادی سے متعلق متنازع عبارت اور فرضی تصاویر پر مبنی اشتہارات شائع کیے گئے ہیں۔ ان اشتہارات میں مبینہ طور پر خواتین کی توہین، ریاستی قوانین کی خلاف ورزی اور سماجی قرینوں کی کھلے عام توہین کی گئی ہے۔