.

خوش نظرآنے والی خواتین کو مارنا چاہتا ہوں:جاپانی مجرم کا انوکھا اعتراف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جمعہ کی شام کو جاپان کے دارالحکومت ٹوکیو میں ایک مسافر ٹرین میں ایک جاپانی شخص کے حملے میں خواتین سمیت متعدد مسافروں کے زخمی ہونے کے بعد پولیس نے اس کے محرکات کا پتا چلایا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ اس نے ریل گاڑی میں گھس کرحملہ کرنےوالے ملزم کو پکڑ لیا ہے۔ اس نے دوران تفتیش کہا ہے کہ وہ ’خوش‘ نظرآنے والی خواتین کو قتل کرنا چاہتا ہے۔

جاپانی میڈیا نے ہفتے کے روز رپورٹ کیا کہ پولیس نے ایک 36 سالہ شخص کو گرفتار کیا ہےجس نے مسافر ٹرین میں گھس کر مسافروں پر حملہ کیا۔ ملزم نے متعدد افراد پر چاقو سے وار کیا۔ ملزم نے پولیس کو بیان دیتے ہوئے کہا کہ اس نے ایسا اس لیے کیا کیونکہ وہ خوش نہیں دیکھ سکتا اور خوش نظرآنے والی عورتوں کو موت کے گھاٹ اتارنا چاہتا ہے۔

چاقو حملے میں یونیورسٹی کا ایک طالب علم شدید زخمی ہے جبکہ باقی زخمیوں کی حالت خطرے سے باہر بیان کی جاتی ہے۔

"میں عورتوں کو قتل کرنا چاہتا ہوں"

اس نے پولیس کو بیان دیتے ہوئے کہا کہ جب وہ 6 سال کا تھا اسے محسوس ہونے لگا کہ وہ خوش عورتوں کوپسند نہیں کرتا اور وہ بہت سے لوگوں کو مارنا چاہتا ہے۔

جاپانی پولیس اس قسم کے جرائم کی تفتیش کر رہی ہے جسے ملک میں اپنی نوعیت کا انوکھا کیس سمجھا جا رہا ہے۔