.

سعودی عرب نے کابل سے اپنا تمام سفارتی عملہ نکال لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب نے افغانستان کی موجودہ غیریقینی صورت حال کے پیش نظر کابل سے اپنا تمام سفارتی عملہ نکال لیا ہے۔

سعودی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں افغان دارالحکومت میں واقع اپنے سفارت خانے سے تمام ارکان کو وطن واپس لانے کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ تمام سفارت کار اور اہلکار بالکل صحت مند ہیں۔

کابل میں طالبان جنگجوؤں کے داخلے اور صدارتی محل پر کنٹرول کے بعد امریکا بھی اپنے سفارت خانے کے سیکڑوں ملازمین کو نکال رہا ہے لیکن سوموار کو کابل کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر افراتفری کی صورت حال اور تشدد کے واقعے میں پانچ افراد کی ہلاکت کے بعد تمام کمرشل پروازیں عارضی طور پربند کردی گئی ہیں۔

ہوائی اڈے پر ہزاروں افغان اور غیرملکی کمرشل طیاروں پر سوارہونے کی امید میں موجود ہیں۔یہ تمام افراد طالبان کے خوف سے افغانستان سے راہ فرار اختیار کررہے ہیں لیکن طالبان کے کنٹرول کے بعد دوسرے روز کابل میں مجموعی طور پر صورت حال پُرامن بتائی جاتی ہے مگر لوگ ماضی کے مزعومہ خدشات کے پیش نظر ملک چھوڑنا چاہتے ہیں۔