.

افغانستان سے امریکی انخلا کا فائدہ ایران، روس اور چین کو ہوا: ٹونی بلیئر

کابل پر قبضے کے بعد سے سابق برطانوی وزیر اعظم کا پہلا رد عمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سابق برطانوی وزیراعظم ٹونی بلیئر نے کہا ہے کہ 2001 میں امریکا کی قیادت میں افغانستان پر حملہ ’افغانستان کو تنہا چھوڑ کر‘ خطرناک اور غیر ضروری عمل تھا۔

افغان حکومت کے خاتمے کے بعد اپنے پہلے بیان میں مسٹر بلیئر نے امریکی انخلا کو ’احمقانہ‘ اور ’ایک بڑی حکمت عملی کی بنیاد پر نہیں بلکہ ایک سیاسی اقدام پر‘ قرار دیا۔

انھوں نے اپنے انسٹی ٹیوٹ کی ویب سائٹ پر شائع ایک مضمون میں لکھا کہ افغانستان اور اس کے لوگوں کو تنہا چھوڑنا ایک تباہ کن ، خطرناک اور غیر ضروری عمل تھا جو نہ تو ان کے مفاد میں ہے اور نہ ہی ہمارے مفاد میں ہے۔

افغانستان میں موجود برطانوی فوج
افغانستان میں موجود برطانوی فوج

’یہ ضروری نہیں تھا۔ ہم نے صرف یہ کرنے کا فیصلہ کیا۔‘

انھوں نے کہا کہ ’یہ محض 'مستقل جنگوں' کو ختم کرنے کے احمقانہ سیاسی نعرے کی پیروی میں کیا گیا ، جیسے کہ 2021 میں ہماری موجودگی کا 20 یا 10 سال پہلے کے ہمارے عزم سے کوئی تعلق نہیں ہے۔