’صحافیوں نے کیا پریشان کِیا ،مکھی نے تو حد ہی کر دی‘

وائٹ ہاؤس کی پریس سیکرٹری کو انٹرویو میں مکھی کے حملے کا سامنا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

وائٹ ہاؤس کی پریس سکریٹری جین ساکی نے نوکری سنبھالنے کے بعد سے صحافیوں کے ساتھ سخت محاذ آرائی کی ہے لیکن کسی نے بھی انہیں اس حملے کی طرح پریشان نہیں کیا جیسا کہ پیر کی پریس کانفرنس کے دوران ان کوایک مکھی کے ہاتھوں پریشان ہونا پڑا۔

جین ساکی ’این بی سی نیوز‘ پر وائٹ ہاؤس کے نامہ نگار پیٹر الیگزینڈر کے اس سوال کا جواب دینے کی کوشش کر رہی تھی کہ کیا طالبان کے لیے اربوں ڈالر کا امریکی فوجی سازوسامان چھوڑنے سے کیا امریکا کم محفوظ نہیں گیا ہے؟۔

انہوں نے اس سوال کا جواب دینے کی کوشش کی لیکن آوارہ مکھی نے انہیں سخت پریشان کردیا۔ کالی سیاہ مکھی مسز ساکی کے گورے چہرے پر بیٹھنے کی کوشش کررہی تھی اور ساکی اسے بار بار ہاتھ سے دور ہٹانے کی کوشش کرتی۔

ساکی نے مکھی کو مارا اور پھر قطعہ کلامی پر صحافی سے معذرت بھی کی۔ انہوں نے کہا کہ مکھی کا انداز ’جارحانہ‘ تھا۔ اس موقعے کی ایک ویڈی بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی ہے۔

اس کیڑے یا مکھی کا پتا نہیں چل سکا مگر اس کے جین ساکی کی جواب دینے کی صلاحیت کو بری طرح متاثر کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں