.
افغانستان وطالبان

خسرہ کے سبب ہزاروں افغانوں کے امریکا کوچ کرنے میں التوا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایک انگریزی جریدے کے مطابق امریکا پہنچنے والے افغانوں میں خسرہ کے چار کیس سامنے آنے کے بعد تقریبا 12 ہزار افغانوں کی امریکا منتقلی کا عمل التوا کا شکار ہو جائے گا۔

پولیٹیکو میگزین نے بتایا ہے کہ امریکا میں صحت سے متعلق حکام نے سفارشات پیش کی ہیں کہ امریکی اڈوں میں منتقل کیے جانے والے افغانوں کا ٹیسٹ کیا جائے اور انہیں خسرہ کی ویکسین دی جائے۔ ان میں جرمنی اور قطر میں امریکی اڈے خاص طور پر شامل ہیں۔

اس صورت حال کے نتیجے میں منتقلی کے عمل کو کم از کم کئی ہفتوں تک پھیلانے کی ضرورت ہو گی۔

واضح رہے کہ جرمنی میں امریکی فوجی اڈے اور اس کے نواح میں 17 ہزار افغانوں کو رکھا گیا ہے جب کہ اطالیہ اور ہسپانیہ میں امریکی اڈوں میں 4300 کے قریب افغان موجود ہیں۔