.

صدربائیڈن کے مشیرقومی سلامتی جیک سلیوان کا دورۂ سعودی عرب؛ولی عہد سے ملاقات کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی صدرجو بائیڈن کے قومی سلامتی کے مشیرجیک سلیوان امریکا کے خصوصی ایلچی برائے یمن ٹِم لنڈرکنگ کے ہمراہ سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کا دورہ کررہے ہیں۔

وائٹ ہاؤس کی قومی سلامتی کونسل کی ترجمان ایملی ہورنے نے ایک بیان میں کہا کہ این ایس سی کے مشرق اوسط اور شمالی افریقا کے لیے رابطہ کاربریٹ میک گرک بھی سلیوان اور ٹم لنڈرکنگ کے ساتھ دورے پر روانہ ہورہے ہیں۔انھوں نے کہا کہ سلیوان خطے کے سینیر رہ نماؤں سے علاقائی اور عالمی سطح پر درپیش چیلنجوں کے بارے میں بات چیت کریں گے۔

امریکی خبررساں ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس (اے پی) کے مطابق جیک سلیوان پیر کو خطے کے دورے پرروانہ ہونے والے تھے۔ وہ سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے ساتھ یمن میں جاری بحران کے بارے میں بات چیت کریں گے۔بے نامی ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ ان کی سعودی عرب کے نائب وزیر دفاع شہزادہ خالد بن سلمان سے بھی ملاقات متوقع ہے۔

اقوام متحدہ نے جنگ زدہ یمن کی صورت حال کو دنیا کا سب سے بڑا انسانی بحران قراردیا ہے۔ گذشتہ سات سال سے جاری لڑائی کے نتیجے میں یمنی قوم معاشی بحران سے دوچارہے اور ملک میں خوراک کی قلّت پیدا ہوچکی ہے۔

یمن میں ایران کی اتحادی حوثی ملیشیا کے خلاف نبردآزما امریکا اور سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحاد نے دیگر ممالک کی طرح جنگ زدہ ملک کو مزید کروڑوں ڈالر کی اضافی امداد دینے کا وعدہ کیا ہے۔