.

یواے ای میں آجروں کی اکثریت ایک سال میں نئے ملازمین بھرتی کرنےکی خواہاں: سروے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جاب سائٹ Bayt.com کے مطابق متحدہ عرب امارات میں 10 میں سے سات آجراگلے 12 ماہ کے دوران میں خاص طور پر حفظانِ صحت کے شعبے میں نئے ملازمین کی خدمات حاصل کرنا چاہتے ہیں اور اس طرح اپنی افرادی قوت کو مہمیزدینے کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔

اس ویب گاہ کے بھرتی ماہرین کی قیادت میں کیے گئے ایک سروے سے پتاچلا ہےکہ جن صنعتوں میں اگلے تین ماہ میں نئے عملہ کی بھرتی کا امکان ہے،ان میں صحت کی دیکھ بھال یا طبّی خدمات (66 فی صد)، انسانی وسائل (65 فی صد) اور صارفین کی اشیاء یا تیزی سے فروخت ہونے والی صارفین کی اشیاء (64 فی صد) ہیں۔

Bayt.com کے مڈل ایسٹ جاب انڈیکس سروے سے پتا چلا ہے کہ متحدہ عرب امارات کے 72 فی صد آجر نئے ملازمین کی بھرتی کا ارادہ رکھتے ہیں جبکہ ایک چوتھائی (25 فی صد) کا کہنا ہے کہ وہ کسٹمرسروس کے نمایندے کے طور خدمات انجام دینے والے ملازمین کو اگلے تین ماہ میں بھرتی کرنا چاہتے ہیں۔

نصف سے زیادہ آجروں (52 فی صد) نے کہا کہ وہ اچھی انگریزی بولنے والے اورعربی زبان میں ابلاغی مہارت کے حامل درخواست دہندگان کی تلاش میں ہیں جبکہ 48 فی صد نے کہا کہ وہ اپنی اپنی ٹیم میں نئے کھلاڑیوں کی شمولیت چاہتے ہیں اور 43 فی صد نے قائدانہ صلاحیت رکھنے والے افراد کواپنے ہاں ملازم رکھنے کی بات کی ہے۔

انسانی وسائل کے مینجراور استقبالیہ پر خدمات انجام دینے والے ملازمین17 فی صد مانگ کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔کاروباری انتظام (بزنس مینجمنٹ)، انجینئرنگ اور انفارمیشن ٹیکنالوجی میں اعلیٰ تعلیم یافتہ افراد کی مانگ بالترتیب 34 فی صد، 28 فی صد اور 17 فی صد ہے اور آجر حضرات ان شعبوں میں اعلیٰ تعلیم اور مہارتوں کے حامل عملہ کو بھرتی کرنا چاہتے ہیں۔

قریباً 38 فی صد جواب دہندگان نے کہا کہ وہ انتظامی تجربے کے حامل امیدواروں کی تلاش میں ہیں جبکہ 31 فی صد ایسے امیدوار چاہتے ہیں جن کا درمیانی سطح کا تجربہ ہو اور 24 فی صد سیلز اور مارکیٹنگ کے شعبوں میں تجربہ کے حامل افراد کو اپنے ہاں بھرتی کرنا چاہتے ہیں۔