.
یمن اور حوثی

امریکا کی جانب سے مارب میں حوثیوں کے حملے کی شدید مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں امریکی سفارت خانے نے مارب شہر پر حوثیوں کے میزائل حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے ایران نواز ملیشیا کی غنڈہ گردی قرار دیا ہے۔ حملے کے نتیجے میں 30 سے زیادہ شہری ہلاک اور زخمی ہو گئے۔

مذکورہ مذمت یمن میں قائم مقام امریکی سفیر کیتھی ویسلے کی جانب سے پیر کے روز کی گئی ایک ٹویٹ میں سامنے آئی۔ ویسلے کا کہنا تھا کہ وہ مارب شہر کے رہائشی علاقے میں حوثیوں کے خوف ناک حملے کی شدید مذمت کرتی ہیں جس میں متعدد شہری ہلاک و زخمی ہو گئے۔ ویسلے نے مزید کہا کہ اس طرح کے حملوں سے حوثی ملیشیا اپنی غنڈہ گردی ثابت کر رہی ہے۔

امریکی قائم مقام خاتون سفیر نے زور دیا کہ حوثیوں کو چاہیے کہ اپنے یمنی بھائیوں کے خلاف اس جارحیت کو چھوڑ کر تنازع کے پر امن حل کی کوشش کریں۔

یاد رہے کہ اتوار کے روز حوثی ملیشیا نے مارب شہر کے ایک رہائشی علاقے کو دو میزائلوں کے ذریعے نشانہ بنایا۔ اس کے نتیجے میں ایک خاتون اور دو بچے جاں بحق اور کم از کم 30 شہری زخمی ہو گئے۔ زخمیوں میں چھ خواتین اور پانچ بچے شامل ہیں۔

واضح رہے کہ حالیہ ہفتوں میں ایران نواز حوثی ملیشیا کی جانب سے مارب پر قبضے کے لیے پھر سے حملے شروع کیے جانے کے بعد سے اب تک سیکڑوں حوثی جنگجو اور یمنی فوج کے کئی اہل کار ہلاک ہو چکے ہیں۔ یمن کے شمال میں واقع مارب کا علاقہ تیل کی دولت سے مالا مال ہے۔