.

سعودی عرب :عمرہ کی اجازت کووِڈ ویکسین کی دونوں خوراکیں لگوانے سے مشروط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں حکام نے اعلان کیا ہے کہ اتوار سے مملکت میں منظورشدہ کووِڈ-19 کی کسی ویکسین کی دونوں خوراکیں لگوانے والوں ہی کو عمرے کے اجازت نامے جاری کیے جائیں گے۔

سعودی عرب کی وزارت حج و عمرہ کے ایک اعلامیے کے مطابق کہ اس نئے فیصلے کا اطلاق اتوار 10 اکتوبرکو شام 6 بجے سے ہوگا۔

وزارت نے سرکاری پریس ایجنسی کی جانب سے ہفتے کو جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’مکہ مکرمہ میں المسجدالحرام میں مناسکِ عمرہ اور نمازیں ادا کرنے اورمدینہ منورہ میں مسجد نبوی صلی اللہ علیہ وسلم میں داخلے کے اجازت ناموں کے اجراء پرنئی پابندی عاید کردی گئی ہے۔اب ان دونوں مقدس مقامات تک صرف ان ہی عازمین اور زائرین کو داخل ہونے کی اجازت دی جائے گی جنھوں نے مملکت میں منظورشدہ کرونا وائرس کی کسی ویکسین کی دونوں خوراکیں لگوا رکھی ہیں۔نیز جن لوگوں کو ویکسین لگوانے سے مستثنیٰ قراردیا گیا ہے، ان کے نام وزارت صحت کی ’’توکلنا" ایپلی کیشن پر ظاہر ہونے چاہییں۔‘‘

وزارت نے واضح کیا ہے کہ جن لوگوں نے پہلے ہی عمرے کے لیے اپنا وقت محفوظ کرالیا ہے،انھیں مکہ یا مدینہ میں عمرہ، نماز یا مناسک ادا کرنے کا اجازت نامہ مل چکا ہے لیکن انھوں نے ابھی تک ویکسین کی دونوں خوراکیں نہیں لگوائی ہیں،تو انھیں اپنے اجازت کی تنسیخ سے بچنے کے لیے مقررہ تاریخ سے 48 گھنٹے پہلے اپنی دوسری خوراک لگوانا ہوگی۔

وزارت نے کہا ہے کہ سعودی عرب میں وبائی امراض کی صورت حال میں پیش رفت کے مطابق وبا سے متعلق تمام احتیاطی اورحفاظتی اقدامات کے جاتے ہیں اور یہ مملکت کی پبلک ہیلتھ اتھارٹی (وقایا) کی جانب سے مسلسل تشخیص سے مشروط ہیں۔