.

اسرائیل میں موجود امریکی فورسز کی امریکی مرکزی کمان میں شمولیت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

العربیہ نیوز چینل کو ایسی معلومات موصول ہوئی ہیں جن سے خطے میں ایران کا مقابلہ کرنے کے لیے امریکا اسرائیل تعاون کی تفصیلات کا انکشاف ہوتا ہے۔

گذشتہ ماہ ستمبر میں امریکا کی جانب سے ایک مختصر بیان میں بتایا گیا تھا کہ اسرائیلی میں موجود امریکی فورسز مشرق وسطی میں امریکی مرکزی کمان میں شامل ہو گئی ہیں۔ مبصرین کے نزدیک ایران کے بڑھتے ہوئے خطرے بالخصوص اس کے میزائل پروگرام سے نمٹنے کے سلسلے میں یہ اقدام انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

ایک امریکی عسکری ذمے دار کے مطابق یہ مشرق وسطی میں ایک ٹرننگ پوائنٹ ہے۔ اس سے قبل اسرائیل میں موجود ان فورسز کا امریکی مرکزی کمان میں شامل ہونا نا ممکنات میں سے تھا۔

اس شمولیت کے حوالے سے تکنیکی تفصیلات کے بارے میں العربیہ اور الحدث نیوز چینلوں کے ذرائع نے بتایا کہ امریکی ریاست فلوریڈا میں مکڈیل بیرک ،،، امریکیوں اور اسرائیلیوں کے درمیان عسکری معلومات کی رابطہ کاری کا مرکز بن گیا ہے۔

یہ امر اس زاویے سے بہت اہمیت رکھتا ہے کہ اب امریکیوں کو ایران یا اس کی ملیشیاؤں کی جانب سے بھیجے گئے میزائلوں اور ڈرون طیاروں کے حوالے سے خبردار کرنے والے نیٹ ورکس کو منظم کرنے پر زیادہ قدرت حاصل ہو جائے گی۔

علاوہ ازیں اب امریکا خطے میں اپنے دفاعی سسٹم کی تعداد کم کر کے خطے کے ممالک کے اپنے سسٹمز پر زیادہ انحصار کر سکتا ہے۔ ان میں اسرائیلی دفاعی نظام شامل ہے۔