.

ایران آیندہ مہینوں میں وینزویلا کے ساتھ 20 سالہ تعاون کامعاہدہ طے کرے گا:وزیرخارجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران اور وینزویلا آیندہ مہینوں میں 20 سالہ تعاون کے معاہدے پردست خط کریں گے۔یہ بات ایرانی وزیر خارجہ حسین امیرعبداللہیان نے سوموارکو تہران میں وینزویلا کے اپنے ہم منصب کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں بتائی ہے۔

ایران کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایرنا نےامیرعبداللہیان کے حوالے سے بتایا کہ دونوں ممالک کے درمیان طویل مدتی معاہدے پر آنے والے مہینوں میں وینزویلا کے صدر نِکولس مادورو کے دورۂ تہران کے موقع پردست خط کیے جائیں گے۔

البتہ انھوں نے اس مجوزہ معاہدے کے مندرجات کی کوئی تفصیل نہیں بتائی۔ان کا کہنا تھا:یہ سب اس بات کی تصدیق ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان دوطرفہ تعلقات فروغ پذیر ہیں۔

ایرنا کی رپورٹ کے مطابق وینزویلا کے وزیرخارجہ فیلکس پلاسینسیا گونزالز نے ایرانی صدر ابراہیم رئیسی سے بھی تہران میں ملاقات کی ہے اور ان سے دونوں ممالک کے درمیان دوطرفہ تعلقات کے بارے میں تبادلہ خیال کیا ہے۔

واضح رہے کہ ایران اور وینزویلا اوپیک کے رکن ممالک ہیں اور دونوں ہی تیل کے شعبے میں امریکا کی پابندیوں کی زد میں ہیں۔

یادرہے کہ ایران نے مارچ میں چین کے ساتھ 25 سالہ تعاون کا ایک معاہدہ طے کیا تھا۔ گذشتہ ہفتے تہران نے کہا تھا کہ وہ ماسکو کے ساتھ بھی اسی طرح کے ایک معاہدے پر دست خط کرنے کوتیار ہے۔

ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان سعیدخطیب زادہ نے کہا کہ ایران اورروس کے درمیان تعاون کے عالمی معاہدے کے عنوان سےاس دستاویز کے ابتدائی انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں اورتہران کو امید ہے کہ آیندہ مہینوں میں اس دستاویزپردونوں ملکوں کی طرف سے دست خط کردیے جائیں گے۔