.

منتخب حکومت اجرتی جنگوؤں کے انخلا کی راہ پر گامزن رہے گی : لیبیائی وزیر خارجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا کی وزیر خارجہ نجلا المنقوش کا کہنا ہے کہ منتخب حکومت ملک سے غیر ملکی اجرتی جنگجوؤں اور غیر ملکی افواج کے انخلا کا راستہ جاری رکھے گی۔

العربیہ نیوز چینل کو دیے گئے ایک انٹرویو میں نجلا کا کہنا تھا کہ "تمام اجرتی جنگجوؤں کے کوچ کا مطالبہ انتخابات کی راہ میں رکاوٹ ہو گا اس لیے کہ ان عناصر کا نکلنا ایک پیچیدہ معاملہ ہے جو ایک دن میں ہر گز نہیں ہو گا"۔

وزیر خارجہ نےو اضح کیا کہ "انتخابات سے قبل 20% اجرتی جنگجوؤں کا انخلا اعتماد کا عامل ہو گا"۔

نجلا نے لیبیا کی عسکری کمیٹی (5+5) کے کردار کو بھی سراہا۔

لیبیا میں صدارتی کونسل نے جمعرات کے روز بتایا تھا کہ کونسل کے سربراہ محمد المنفی اور "استحکامِ لیبیا" کانفرنس میں شریک اقوام متحدہ کے وفد کی سربراہ نے طرابلس میں ملاقات کے دوران میں باور کرایا کہ پارلیمانی اور صدارتی انتخابات کا اجرا مقررہ تاریخ پر بیک وقت ہو گا۔

طرابلس اور واشنگٹن کے تعلقات کے حوالے سے لیبیا کی وزارت خارجہ کا کہنا تھا کہ امریکی پالیسی اس بات کا ادراک رکھتی ہے کہ لیبیا کا استحکام خطے کے لیے اہم ہے۔