سعودی عرب کی سامی کاایرواسٹرکچراجزاء کی مشترکہ تیاری کے لیے فرانسیسی فرم سے سمجھوتا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی عرب کے سرکاری سرمایہ کاری فنڈ کی ملکیتی ملٹری انڈسٹریز(سامی) اور نیشنل چیمپئن آف ملٹری انڈسٹریز لوکلائزیشن نے فرانس کے فیج اے سی ایروگروپ اور مملکت کی صنعتی سرمایہ کارکمپنی (دسر) کے ساتھ فضائی پرزوں کی تیاری کے مشترکہ منصوبے سے متعلق سمجھوتا طے پاگیا ہے۔اس کے تحت سعودی عرب میں ایرواسٹرکچرز کے اجزاء کی تیاری کے لیے اعلیٰ معیار کی مینوفیکچرنگ تنصیب کی تعمیرکی جائے گی۔

اس ڈیل کا اعلان فرانسیسی صدرعمانوایل ماکرون کے دورہ سعودی عرب کے موقع پرمنعقدہ سعودی فرانسیسی سرمایہ کاری فورم میں کیا گیا ہے۔اس سمجھوتے پر سامی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او)انجنیئر ولیدابوخالد، فیج اے سی ایروگروپ کے چیئرمین اور سی ای او ژاں کلاڈ میلارڈ اور سعودی عرب کی انڈسٹریل انویسٹمنٹ کمپنی کے سی ای او ڈاکٹررعدالرئیس نے دست خط کیے ہیں۔

اس مشترکہ منصوبے کا مقصد سعودی عرب کی ایرو اسٹرکچرمینوفیکچرنگ صنعت کی صلاحیتوں میں اضافہ، سعودی انجینئرزاورتکنیکی ماہرین کو منصوبے کے حصے کے طور پر کام کرنے کی تربیت دینا اور سعودی وژن 2030ء کے مطابق فوجی اور سول ایرواسپیس صنعتوں کی مقامیت کا فروغ ہے۔ابتدائی طور پر ہلکی ملاوٹی دھات(ایلومینیم) اور سخت فولاد (ٹائی ٹینیئم) سے فضائی طیاروں اور ہیلی کاپٹروں کے پرزوں کی تیاری پر توجہ مرکوز کی جائے گی۔

سامی کے چیئرمین احمد بن عقیل الخطیب نے اس موقع پر کہا کہ ’’اس نئے مشترکہ منصوبہ سے ہم نےسعودی عرب میں فوجی صنعت کے شعبے کی ترقی میں معاونت کے اپنےعزم کومزید مستحکم کیا ہے۔مقامی کمپنیوں اور ایک معروف بین الاقوامی فرم کے درمیان ایک امتیازی شراکت داری کے ذریعے ہم ایرواسٹرکچرزمیں جدیدٹیکنالوجیوںکی مقامیت کا عمل تیز کرنا چاہتے ہیں۔اس طرح ہم سعودی وژن 2030 میں بیان کردہ اہداف کے مطابق سرمایہ کاری کے بہاؤ میں بھی اضافہ کریں گے اور سعودی نوجوانوں کے لیے اعلیٰ معیار کی ملازمت کے مواقع پیدا کریں گے‘‘۔

دس سال کی مدت کے دوران میں یہ منصوبہ بڑی سرمایہ کاری کا موجب بنے گا۔ان میں سے زیادہ تر کی مالی معاونت مقامی مالیاتی ادارے کریں گے۔سمجھوتے میں جدہ میں ایک نئی پیداواری تنصیب میں کام کا آغاز بھی شامل ہے۔یہ طیاروں کے پرزے تیار کرنے والی کمپنی (اے اے سی سی) کی سائٹ پر واقع ہے۔ فی الحال سال 2021 کے آخرتک ابتدائی مصنوعات تیارکرنے کے لیے چار جدید پانچ محوری سی این سی مشینیں اور معاون پیداواری آلات پر کام شروع کیا جا رہا ہے۔اس تمام منصوبے میں فیج اے سی ایروگروپ کے ماہرین کی ٹیم تیکنیکی معاونت کرے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں