شہزادہ محمد بن سلمان کی سعودی عرب کی افتتاحی گراں پری میں شرکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے جدہ میں منعقد ہونے والی مملکت کی پہلی گراں پری میں اتوار کو شرکت کی ہے۔

فارمولا ٹو کارریس کے مقابلے اس ہفتے کے آخرمیں جدہ کورنیش اسٹریٹ ٹریک پرسعودی عرب کی افتتاحی فارمولا ون گراں پری کی جانچ اورمعاونت کے طور پر منعقد کیے گئے ہیں۔

اس کا 6.1 کلومیٹر کا لے آؤٹ، اطالوی ’ہیکل آف اسپیڈ‘ منزا کے بعد کیلنڈر پردوسرا تیزترین لے آؤٹ ہے اور یہ بنیادی طور پرسیدھا اونچا، نیچااور دیواروں میں گھری ڈھلوانوں سے بنا ہے۔

فارمولا ون چیمپئن شپ کے لیڈرمیکس ورسٹپین سعودی عرب گراں پری کا آغاز گرڈ پر تیسرے نمبر سے کریں گے، ان کی ریڈبل ٹیم نے کوالیفائنگ کریش کے بعد ڈچ ڈرائیورکے گیئرباکس کو تبدیل نہ کرنے کا انتخاب کیا ہے۔

24 سالہ ورسٹپین عبوری طور پر تیسرے نمبر پر تھے۔ ہفتے کے روز سرکٹ میں انھوں نے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کیااور آخری کونے سے باہر نکلنے پر رکاوٹوں کو عبورکرتے ہوئے مرسیڈیز کو ٹائٹل حریف لیوس ہیملٹن کے ساتھ ٹریک پر پہلی صف میں لے آئے تھے۔

اس سے ورسٹپین کی گاڑی کی پچھلی سسپینشن ٹوٹ گئی تھی اور یہ خدشہ ظاہرکیا گیا ہے کہ اس سے ان کے گیئر باکس کو بھی نقصان پہنچا ہوگا۔

قواعد کے مطابق ڈرائیور کو مسلسل چھے دوڑوں کے لیے سنگل گیئر باکس استعمال کرناہوتا ہے اور ایک نئے گیئر باکس کو فٹ کرتے ہوئے ورسٹپین کو پانچ جگہ گرڈ ڈراپ کرتے دیکھا گیا۔

اسٹیوارڈز کی جانب سے شائع کردہ آخری گرڈ میں ورسٹپین کو تیسرا آغاز کرتے ہوئے دکھایا گیا اور ایف آئی اے کی تکنیکی رپورٹ میں گیئرباکس شامل نہیں تھا۔اس رپورٹ میں کوالیفائنگ کے بعد تبدیل کیے گئے پرزوں کی فہرست دی گئی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں