یمن اور حوثی

صنعاء میں قانونی عسکری اہداف پر بم باری کی ہے: عرب اتحاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمن میں آئینی حکومت کے حامی عرب اتحاد نے منگل کو علی الصبح صنعاء میں قانونی عسکری اہداف کو بم باری کا نشانہ بنایا۔

اتحاد کے مطابق صنعاء میں بیلسٹک میزائلوں اور ڈرون طیاروں سے متعلق ٹھکانوں کو تباہ کر دیا گیا۔

اتحاد نے واضح کیا کہ نشانہ بنائے گئے مقامات میں بیلسٹک میزائلوں اور ڈرون طیاروں کے ڈپو اور ان کی اسمبلنگ کے ورکشاپ شامل ہیں۔ علاوہ ازیں صنعاء کے اطراف پہاڑی غاروں اور خفیہ گوداموں کو تباہ کر دیا گیا جو بیلسٹک میزائلوں کے ذخیرے کے لیے استعمال ہو رہے تھے۔

عرب اتحاد نے باور کرایا ہے کہ مذکورہ کارروائیاں دشمن کی جانب سے شہریوں کو نشانہ بنانے کی کوششوں کے جواب میں عمل میں آئی ہیں۔

العربیہ اور الحدث نیوز چینلوں کے ذرائع کے مطابق عرب اتحاد کی بم باری کے بعد صنعاء کے مختلف علاقے زور دار دھماکوں سے گونج اٹھے۔

عرب اتحاد نے زور دیا ہے کہ اس کی کارروائیاں بین الاقوامی انسانی قانون کے موافق ہیں۔ اتحاد کے مطابق صنعاء میں شہری مقامات اور شہریوں کو ضرر سے بچانے کے لیے احتیاطی تدابیر اختیار کی گئی ہیں۔

یاد رہے کہ اتوار 28 نومبر سے عرب اتحاد کی جانب سے صنعاء میں متعدد ٹھکانوں کو حملوں کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ ان میں نمایاں ترین مقام صنعاء کا بین الاقوامی ہوائی اڈا ہے۔ تصاویر اور وڈیو کلپوں سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ ایرانی پاسداران انقلاب اور حزب للہ کی ملیشیاؤں نے ہوائی اڈے کو ایک فوجی اڈے میں تبدیل کر دیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں