شام : الاذقیہ کی بندرگاہ میں کنٹینروں کے حصے پر اسرائیل کی بم باری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیل نے شام کے مغرب میں الاذقیہ کی بندرگاہ پر کنٹینروں کے حصے کو فضائی بم باری کا نشانہ بنایا ہے۔ شامی حکومت کے سرکاری میڈیا کے مطابق یہ ملک میں اہم تنصیب پر اپنی نوعیت کا غیر معمولی حملہ ہے۔

عسکری ذرائع نے بتایا ہے کہ پیر اور منگل کی درمیانی شب مقامی وقت کے مطابق 1:23 پر اسرائیل نے الاذقیہ کے جنوب مغرب میں بحیرہ روم کی سمت سے کئی میزائل داغے۔

اس کے نتیجے میں بندرگاہ پر متعدد تجارتی کنٹینروں میں آگ بھڑک اٹھی تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ سرکاری میڈیا کے مطابق شامی فوج کے فضائی دفاعی نظام نے الاذقیہ کی فضاؤں میں اسرائیل کی جانب سے داغے گئے کئی میزائل فضا میں تباہ کر دیے۔

فائر بریگیڈز کی ٹیمیں کنٹینروں میں لگی آگ کو بجھانے میں کامیاب ہو گئیں۔

یاد رہے کہ گذشتہ برسوں کے دوران میں اسرائیل نے شام میں سیکڑوں حملے کیے۔ ان کارروائیوں میں شامی فوج کے ٹھکانوں کے علاوہ خاص طور ایرانی ملیشیاؤں اور لبنانی حزب اللہ کے اہداف کو نشانہ بنایا گیا۔

اسرائیل کی جانب سے شاذ و نادر ہی شام میں ان حملوں کی تصدیق کی جاتی ہے۔ البتہ اسرائیل بارہا یہ موقف دہرا چکا ہے کہ وہ شام میں ایران کے عسکری طور پر قدم جمانے کی کوششوں کو روکنے کا سلسلہ جاری رکھے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں