ایران کا امریکا اوراسرائیل کی مشترکہ فوجی مشق کی رپورٹ پر’بھاری قیمت‘چکانے کا انتباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایرانی فوج کے ایک اعلیٰ عہدہ دار نے خبردارکیا ہے کہ جوہری تنصیبات پر کسی حملے کی صورت میں جارحین کو بھاری قیمت چکانا پڑے گی۔

انھوں نے اس رپورٹ کے ردعمل میں یہ سخت بیان جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ اگر سفارت کاری ناکام ہوجاتی ہے تو ایران کے جوہری مقامات کے خلاف حملوں کی تیاری کے لیے امریکا اور اسرائیل ممکنہ فوجی مشقوں کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔

ایران کے اعلیٰ سیکورٹی ادارے سے وابستہ نورنیوز نے ایک بے نام فوجی عہدہ دارکا حوالہ دیتے ہوئے ٹویٹرپر لکھا ہے کہ فوجی کمانڈروں کو ایرانی میزائلوں کے حقیقی اہداف کے ساتھ تجربات کی شرائط فراہم کرنے والے جارحین کو بھاری قیمت چکانا پڑے گی۔

ایک سینیرامریکی عہدہ دار نے جمعرات کو رائٹرز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکا اور اسرائیل کے دفاعی سربراہان ممکنہ مشترکہ فوجی مشقوں پر تبادلہ خیال کرنے والے ہیں۔یہ مشقیں ایران کی جوہری تنصیبات کو تباہ کرنے کے لیے بدترین صورت حال کی تیاری کے ضمن میں کی جارہی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں