امریکا میں پکڑا جانے والا مبینہ دہشت گرد سعودی شہری نہیں : سعودی سفارت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکا میں سعودی سفارت خانے نے باور کرایا ہے کہ گذشتہ ہفتے امریکی حکام نے ایریزونا ریاست میں جس شخص کو حراست میں لے کر اسے مبینہ دہشت گرد قرار دیا ہے وہ سعودی شہری نہیں ہے۔

آج منگل کے روز سفارت خانے نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پر بتایا کہ "اس معاملے سے متعلق امریکی حکام کے ساتھ رابطے کے بعد یہ تصدیق ہو گئی ہے کہ مذکورہ مبینہ دہشت گرد کا تعلق سعودی عرب سے نہیں ہے ... ہم امریکی حکومت کے ساتھ رابطہ کاری میں رہیں گے اور اس حوالے سے ہر طرح کے حقائق پیش کرتے رہیں گے"۔

واضح رہے کہ گذشتہ ہفتے کے آخر میں امریکی سرحدی دستوں کے ذمے داران نے ایریزونا ریاست میں ایک "مبینہ دہشت گرد" کو پکڑنے کا اعلان کیا تھا۔ انہوں نے بتایا تھا کہ یہ شخص سعودی شہریت رکھتا ہے۔ مزید یہ کہ اس شخص کا تعلق "یمنی افراد" سے ہے جن پر امریکی حکام کی نظر ہے۔

سرحدی دستوں کے ذمے دار ذرائع کے مطابق 21 سالہ یہ مشتبہ شخص جمعرات کی شب امریکا میں داخل ہوا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں