یواے ای:کووِڈ-19 کےکیسوں میں 24 گھنٹے میں 50 فی صد اضافہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات میں کووڈ-19 کے تشخیص شدہ یومیہ کیس ایک مرتبہ پھربڑھتے جا رہے ہیں۔حکام نے گذشتہ 24 گھنٹے میں نئے کیسوں میں 50 فی صد اضافے کی اطلاع دی ہے جبکہ انتہائی متعدی اومیکرون متغیّرکے پھیلنے کاخدشہ ظاہرکیاجارہا ہے۔

وزارتِ صحت نے منگل کو بتایا کہ گذشتہ 24 گھنٹے کے دوران میں یواے ای میں کووِڈ-19 کے مجموعی طورپر 452 نئے کیسوں کا پتاچلا ہے۔ایک روز قبل 301 کیس ریکارڈ کیے گئے تھے۔اس طرح ایک دن میں کیسوں میں51 فی صداضافہ ہواہے۔

وزارت نے مزید کہا ہے کہ کووڈ-19کا شکار دوافراد وفات پاگئے ہیں اور اس مہلک وائرس کے 198 مریض صحت یاب ہوگئے ہیں۔

یواے ای میں وبا کے آغاز سے اب تک کووڈ-19 کے مجموعی طورپر7لاکھ 44ہزار 890 کیسوں کی تشخیص ہوئی ہےجبکہ اس وائرس سے 2154 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

آج 25 ستمبر کے بعد سب سے زیادہ کیس رپورٹ ہوئے ہیں۔ تب ملک میں 321مثبت کیس رپورٹ ہوئے تھے۔

وزارت صحت نے یہ واضح نہیں کیا کہ آیا نئے کیسوں میں اومیکرون کا بھی کوئی کیس ہے۔اس نے یکم دسمبرکو تیزی سے پھیلنے والی اس قسم کے پہلے کیس کی تشخیص کی اطلاع دی تھی۔

متحدہ عرب امارات نے کرسمس اور نئے سال کے موقع پر ہونے والی بڑی تقریبات کے بارے میں خبردارکیا ہے۔اس نے تمام سرکاری اداروں میں 3جنوری سے صرف ان لوگوں کوداخلے کی اجازت دینے کااعلان کیا ہے جنھیں کووڈ-19 کی ویکسین لگائی جاچکی ہے۔

یواے ای نے گذشتہ بدھ کو کرسمس اور نئے سال کے لیے سماجی اجتماعات پر پابندیوں کا خاکاپیش کیا تھا اور کہا تھا کہ 80 فی صد تک گنجائش کے ساتھ تقریبات منعقد کی جاسکتی ہے۔یواے ای کے دارالحکومت ابوظبی نےامارت میں بذریعہ سڑک آنے والے لوگوں کے لیے کچھ سرحدی کنٹرول بھی دوبارہ متعارف کرائے ہیں۔

قبل ازیں عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے ہفتے کے روز خبردارکیا تھا کہ کرونا وائرس کی اومیکرون شکل دنیا میں تیزی سے پھیل رہی ہے اور زیادہ قوت مدافعت کی حامل آبادی والے ممالک میں بھی اس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہورہا ہے۔اس کا کہنا تھا کہ اومیکرون کرونا کی ڈیلٹاقسم کے مقابلے میں زیادہ تیزی سے پھیل رہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں