ترکی اپنے فوجیوں کو بچانے کے لیے سیکڑوں شامی جنگجوؤں کو تربیت دے رہا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

شام کے شہر ادلب کے المسطومہ عسکری کیمپ میں "نیشنل آرمی" میں شامل گروپوں کے 400 عناصر کو ترکی کے تیار کردہ عسکری ساز و سامان اور بکتر بند ہتھیاروں کی تربیت دی جا رہی ہے۔ یہ بات شام میں انسانی حقوق کے نگراں گروپ المرصد نے آج اتوار کے روز بتائی۔

المرصد کے مطابق تربیتی مشقوں میں ٹینکوں کی عملی تربیت شامل ہے۔ ترکی کی افواج نے اسے پہلی مرتبہ شامی جنگجوؤں کی تربیت کا حصہ بنایا ہے۔

المرصد نے واضح کیا کہ ترکی کی افواج ایسے تربیت یافتہ عناصر تیار کر رہی ہے جو مختلف نوعیت کے ہتھیار اور عسکری سواریاں استعمال کرنے کی صلاحیت رکھتے ہوں۔ اس کا مقصد مذکورہ شامی جنگجوؤں کو معرکوں میں جھونکنا ہے تا کہ اولین صفوں میں ترک فوجیوں کی ضرورت نہ رہے۔

اس سے قبل ترکی نے انقرہ کے ہمنوا گروپوں کے 200 شامی جنگجوؤں کو مختلف اقسام کے بکتر بند شکن ہتھیار استعمال کرنے کی تربیت دی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں