سنگ دل والدین جھگڑے کے بعد معصوم بچوں کو گھر میں قید کر گئے !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مصر کے صوبے الدقہلیہ میں ایک بھیانک جرم کا انکشاف ہوا ہے۔ یہاں والدین نے اپنے دو جڑواں بچوں کو گھر میں اکیلا چھوڑ دیا جہاں وہ مسلسل دو روز تک بھوک سے چیخ و پکار کرتے رہے۔

المنصورہ شہر کے ایک فلیٹ میں دو روز تک چیخ و پکار کا سلسلہ بند نہ ہوا تو پڑوسیوں نے اس میں داخل ہونے کی کوشش کی تاہم دروازے پر باہر سے تالا پڑا ہوا تھا۔ اس پر سیکورٹی ادارے کو اطلاع دی گئی۔

سیکورٹی اہل کاروں نے پہنچ کر فلیٹ کا دروازہ توڑ دیا جس پر انہیں گھر کے اندر دو بچے بے ہوش پڑے نظر آئے۔ بچوں کو جن کی عمریں دو سال سے زیادہ نہ تھیں فوری طور پر ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔

سیکورٹی ادارے کی تحقیقات سے معلوم ہوا کہ یہ دونوں بچے جڑواں ہیں۔ بچوں کا 33 سالہ باپ مزدوری کرتا ہے۔ اس شخص کی اپنی بیوی کے ساتھ تلخ کلامی اور جھگڑا ہوا جس کے بعد وہ دونوں فلیٹ سے نکل گئے اور فلیٹ کو باہر سے تالا لگا دیا۔

سیکورٹی ادارے نے بچوں کے باپ کو گرفتار کر لیا اور اس پر غفلت اور بچوں کی زندگی خطرے میں ڈالنے کے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔ باپ نے اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے بچوں کی ماں کو بھی قصور وار ٹھہرایا ہے۔

دونوں بچوں کو دیکھ بھال کے لیے اُن کی پھوپھی کے حوالے کر دیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں