.

’اثرا‘ کی سعودی عرب میں کانٹنٹ انڈسٹری کے 5 منصوبوں میں معاونت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شاہ عبدالعزیز سنٹر فار ورلڈ کلچر (اثرا) نے قومی پروگرام "لوازمہ کی تیاری" کے تحت 4 منصوبوں کی تکمیل کا اعلان کیا ہے جس کا مقصد مقامی مواد [کانٹنٹ] کی صنعت کو ترقی دینا اور مملکت میں مختلف ثقافتی اور تخلیقی شعبوں میں اس کے مواقع کو فروغ دینا ہے۔

’’اثرا‘‘ کے 10 دیگر تخلیقی منصوبے تکمیل کے مراحل میں ہیں۔ مسلسل شراکت داری، ترقی، مواد کی تقسیم اور مقامی، علاقائی اور عالمی پلیٹ فارمز کے ذریعے وصول کنندہ تک رسائی۔ مواد کی صنعت میں مہارت حاصل کرنا جیسے اہم منصوبوں پر مواد کی تیاری کا سفر جاری ہے۔

پہلے مرحلے میں، "مواد کی تیاری" کے اقدام میں 500 سعودی کمپنیوں اور اداروں نے شرکت کی۔ انہیں 83 منصوبوں میں تقسیم کیا گیا تھا۔ منصوبوں کو اثرا سینٹر کے اندر اور باہر سے مشاورتی کمیٹیوں کے سامنے پیش کیا گیا اور 14 مقامی منصوبوں کا انتخاب کیا گیا۔ اثرا کا ادارہ ثقافتی اور تخلیقی مواد کی صنعت کی خدمت کرتا ہے، جو کہ تخلیقی صلاحیتوں کے پہلوؤں کو فروغ دینے ،ادب، ثقافت اور اختراع کے شعبوں میں مسلسل تجدید کے وژن کے مطابق کام کرتا ہے۔

غنائی سرگرمیاں

ابتدائی طور پر مکمل ہونے والے پراجیکٹس کے اثرات بشمول "ارتھ میوزک" بھی شامل ہے۔ یہ پروجیکٹ 6 گیتوں کے کاموں پر مشتمل ہے۔ دبئی ایکسپو 2020 میں سعودی پویلین میں اس کی جھلک دیکھی گئی تھی۔ گائی گئی نظمیں سعودی پویلین میں 16 ونڈوز پروگرام کا حصہ تھیں، جس پر روشنی ڈالی گئی۔ آرٹ ونڈو پر یہ کام قبل از اسلام کی نظمیں پیش کی گئیں۔ جزیرہ نما عرب کی قدیم شاعری کے نمونے گائے گئے۔

شاہ عبدالعزیز سینٹر
شاہ عبدالعزیز سینٹر

سنیما کے لحاظ سے اس پہل میں متعدد تخلیقی منصوبے شامل تھے جن میں "انسیاب" جو تحریک کے بارے میں ایک فلم ہے۔ اس کے علاوہ "سینما کے خلاف" فلم جو سعودی عرب میں سنیما کی تاریخ سے متعلق ہے۔ "ہارٹ آن سینڈ"۔اینیمیٹڈ فلم ہے جو 15 اقساط میں صحرا کی تاریخ کے بارے میں بات کرتی ہے۔ آخر میں "طلا" اور جلا جیسی چار قسطوں پر مشتمل اینیمیٹڈ فلم ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں