کرونا وائرس

سعودی عرب:انفیکشن میں مسلسل اضافہ؛کووِڈ-19 کے یومیہ کیس 6 ہزارکے قریب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی وزارت صحت نے گذشتہ 24 گھنٹے کے دوران میں کروناوائرس کے 5928 نئے کیسوں کی تشخیص کی اطلاع دی ہے اور اس مہلک وائرس کا شکار دوافراد وفات پا گئے ہیں۔

اس سے کووِڈ-19 کی وجہ سے ہونے والی اموات کی تعداد 8912 ہو گئی ہے۔ بدھ کو تشویش ناک کیسوں کی تعداد بڑھ کر492 ہو گئی ہے۔وزارت صحت نے منگل کے روز تشویش ناک کیسوں کی تعداد454 بتائی تھی۔

مملکت میں کرونا وائرس کے کیسوں کی کل تعداد 632,736 تک پہنچ گئی ہے۔دریں اثناء گذشتہ 24 گھنٹے میں کووڈ-19 کاشکار4981 افراد صحت یاب ہوئے ہیں۔اس طرح اب تک صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد 578,812 ہوگئی ہے۔

سعودی عرب میں کرونا وائرس کی انتہائی متعدی شکل اومیکرون کے پھیلنے کے یومیہ کیسوں کی تعداد میں ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔دسمبرکے اوائل میں محکمہ صحت نے اومیکرون کے پہلے کیس کی اطلاع دی تھی۔اس کے بارے میں خیال کیاجاتا ہے کہ یہ شخص شمالی افریقا کے ایک نامعلوم ملک سے آیاتھا۔

سعودی عرب میں کروناوائرس سے بچاؤ کے لیے ویکسین لگانے کی مہم بھی بھرپورانداز میں جاری ہے اوراب تک مملکت میں شہریوں اور مکینوں کو ویکسین کی 54,364,534 خوراکیں لگائی جاچکی ہیں۔

حکام نے مکہ مکرمہ میں مسجد حرام اور دیگرعوامی مقامات پرسماجی فاصلے کی پابندی دوبارہ نافذ کردی ہے۔اس کے علاوہ عوامی مقامات، گھر کے اندر اور باہر بھی ماسک پہننا لازم قرار دے دیا گیا۔

سعودی حکومت نے حال ہی میں اپنے ہاں نافذالعمل کووِڈ-19 کے قواعد وضوابط پرنظرثانی کی ہے اورخلاف ورزی کے مرتکبین پر جرمانے کی رقم بڑھا دی ہے۔

سعودی وزارت داخلہ کے مطابق جو لوگ سرکاری یا نجی مقامات میں داخل ہونے سے پہلے درجہ حرارت کی جانچ سے انکارکرتے ہیں اور سماجی فاصلے کے قواعد پرعمل نہیں کرتے،ان پر266 ڈالر (1000 سعودی ریال) جرمانہ عاید کیا جائے گا۔کروناقواعد کی باربارخلاف ورزی کے اعادے کی صورت میں جرمانے کی رقم دولاکھ 66 ہزارڈالر (100,000 ریال) تک پہنچ سکتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں