ترک صدر عارضہ قلب میں مبتلا، علاج کے لیے اسرائیلی ڈاکٹر سے رجوع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اسرائیلی میڈیا میں شائع ہونے والی اطلاعات میں دعوٰی کیا گیا ہے کہ ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے حال ہی میں ایک سینیئر اسرائیلی ماہر امراض قلب کی خدمات استعمال کی ہیں جو دل کے ممکنہ مسائل کی نشاندہی کرتی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ زیر بحث ڈاکٹر پروفیسر یتزاک شاپیرا ہیں جو تل ابیب میں سورسکی میڈیکل سینٹر کے ڈپٹی ڈائریکٹر جنرل اور اسپتال میں میڈیکل ٹور ازم کے نگران ہیں۔

ذرائع نے بتایا کہ شاپیرا ایک ماہر امراض قلب ہیں جو متعدد عالمی رہ نماؤں کو طبی مسائل اور علاج کے بارے میں مشورہ دیتے رہے ہیں۔

صحت کے مسائل

اسرائیلی میڈیا نے باخبر ذرائع کے حوالے سے کہا ہے اگر ایردوآن کی ترکی میں اسرائیلی ڈاکٹر سے ملاقات ہو تو یہ حیرت کی بات نہیں ہو گی۔

دوسری جانب اسپتال اور اسرائیلی ڈاکٹر نے اس خبر پر تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا۔

ترک صدر فائل فوٹو
ترک صدر فائل فوٹو

قابل ذکر ہے کہ ترکی میں حالیہ مہینوں میں یہ افواہیں گردش کر رہی ہیں کہ صدر، ایردوآن جو اگلے ماہ اپنی 68 ویں سالگرہ منائیں گے، صحت کے مسائل کا شکار ہیں لیکن گذشتہ نومبر میں ترک ایوان صدر نے گردش کرنے والی افواہوں کے جواب میں ترک صدر کے پرسکون انداز میں چلنے کی 12 سیکنڈ کی ویڈیو جاری کی تھی۔

30 لوگوں کے خلاف قانونی کارروائی

ترکی کے جنرل ڈائریکٹوریٹ آف سیکیورٹی کے مطابق اسی مہینے میں ترک حکام نے 30 سوشل میڈیا کے سرگرم کارکنوں کے خلاف قانونی کارروائی شروع کی جنہوں نے ایردوآن کی صحت سے متعلق من گھڑت پیغامات شائع کیے تھے۔

ڈائریکٹوریٹ نے اس وقت ایک پریس بیان میں یہ بھی کہا تھا کہ یہ پتہ چلا ہے کہ سوشل نیٹ ورک ٹویٹر پر صدر ایردوآن کے حوالے سے موت کا ہیش ٹیگ منتقل کیا گیا تھا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ مذکورہ بالا ہیش ٹیگ کے تحت 30 افراد کی شناخت کی گئی ہے جن کے بارے میں خیال کیا جاتا ہے کہ وہ گمراہ کن معلومات کا مواد شیئر کرتے ہیں اور ان کے خلاف ضروری عدالتی کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں