قاہرہ اور پیرس کے ہوائی اڈوں کے درمیان پہلی "ماحول دوست" پرواز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مصری وزارت شہری ہوابازی نے کل ہفتےکو فرانس کے دارالحکومت پیرس کے لیے ماحول دوست خدمات اور مصنوعات کے ساتھ پہلی پرواز کے فلائٹ آپریشن کا اعلان کیا۔ افریقی براعظم میں کسی ایئر لائن کے لیے یہ اپنی نوعیت کی پہلی ماحول دوست پرواز ہوگی۔ اس کا مقصد پائیدار ترقی کے حصول کے لیے مصری حکومت کے منصوبوں کو آگے بڑھانا ہے۔

ماحولیاتی ذمہ داری

"EgyptAir" کی ہولڈنگ کمپنی کے سربراہ پائلٹ عمرو ابو العینین نے کہا کہ قومی کمپنی کی جانب سے ماحول دوست خدمات اور مصنوعات کے ساتھ اس پرواز کا انعقاد کمپنی کی سماجی ذمہ داری کے دائرے میں آتا ہے تاکہ ماحولیاتی آلودگی کو کم کیا جا سکے۔ اس کے علاوہ اس پرواز کا مقصد دوران پرواز پلاسٹک کی مصنوعات کے استعمال کے 90 فی صد نقصانات کے بارے میں عوام الناس میں شعور اجاگر کرنا ہے۔

’ایجپٹ ایئر‘ نے پلاسٹک کی ایسی 27 مصنوعات کی نشاندہی کی جنہیں ایک بار استعمال کیا جا سکتا ہے۔ یہ اشیا طیاروں میں استعمال ہوتی تھیں۔ اُنہیں ماحول دوست مصنوعات سے تبدیل کیا اور پرواز کے لیے ایک لوگو "گرین سروس فلائٹ"، استعمال ہونے والی تمام مصنوعات اور مواد پر رکھنے کے لیے ڈیزائن کیا گیا۔

انٹرنیشنل ایئر ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن "IATA" کے مطابق ہے کہ ایک مختصر یا طویل مدتی پرواز کے ذریعے ایک مسافر تقریباً 1.43 کلو گرام فضلہ پیدا کرتا ہے۔ ساتھ ہی "ایک باراستعمال" پلاسٹک کے انسانی صحت اور سمندری صحت پر مضر اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

مصر کے شہری ہوا بازی کے وزیر محمد منار نے کہا کہ پائیدار ترقی کے اہداف کے حصول کے لیے مصر کے وژن 2030 کے ساتھ ہم آہنگ رہنا اولین ترجیح ہے۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ مصری شہری ہوا بازی کا شعبہ ایک مربوط اور پائیدار ماحولیاتی نظام کے وجود کے ذریعے موسمیاتی تبدیلی کے اثرات کا مقابلہ کرنے کو بہت اہمیت دیتا ہے جو ماحولیاتی تحفظ سے متعلق ہوا بازی کے شعبے میں تمام سفارشات اور مقامی اور بین الاقوامی قانون سازی کا اطلاق کرتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں