حوثی ملیشیا کی جانب سے داغے گئے دو بیلسٹک میزائل تباہ کر دیے: امارات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

متحدہ عرب امارات کی وزارت دفاع نے اعلان کیا ہے کہ دہشت گرد حوثی ملیشیا کی جانب سے امارات کی سمت داغے گئے دو بیلسٹک میزائلوں کو تباہ کر دیا گیا ہے۔

سرکاری خبر رساں "وام" نے پیر کے روز وزارت دفاع کے حوالے سے بتایا کہ حملے میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ تباہ شدہ میزائلوں کے ٹکڑے ابوظبی کے اطراف مختلف علاقوں میں گرے۔ وزارت دفاع کے مطابق ریاست کو ہر قسم کے حملوں سے محفوظ رکھنے کے لیے تمام مطلوبہ اقدامات کیے جا رہے ہیں۔

امارات کے صدر کے سفارتی مشیر انور قرقاش نے اتوار کے روز اپنی ٹویٹ میں کہا تھا کہ حوثی ملیشیا سے متعلق امارات کی جانب سے عرب لیگ میں پیش کی گئی قرار داد پر رکن ممالک کا اتفاق ہے۔ قرار داد میں حوثی ملیشیا کو ایک دہشت گرد تنظیم قرار دیے جانے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ قرقاش کے مطابق یہ قرار داد امارات کی کامیاب سفارت کاری کا ثبوت ہے۔

اتوار کے روز عرب لیگ کی کونسل کا ایک غیر معمولی اجلاس منعقد ہوا۔ کویت کی صدارت میں مستقل مندوبین کی سطح پر ہونے والے اس اجلاس میں امارات پر ہونے والے حالیہ دہشت گرد حملوں کو زیر بحث لایا گیا۔

عرب لیگ کو کونسل نے امارات میں شہری تنصیبات پر حوثی ملیشیا کے حملوں کی شدید مذمت کی۔ ساتھ ہی امارات کے لیے دیگر ممالک اور علاقائی اور بین الاقوامی تنظیموں کی جانب سے اظہار یک جہتی کا خیر مقدم کیا گیا۔

انور قرقاش
انور قرقاش

کونسل نے باور کرایا کہ حوثی ملیشیا کی جانب سے مرتکب یہ دہشت گرد حملے بین الاقوامی قانون اور بین الاقوامی انسانی قانون کی کھلی خلاف ورزی ہے۔ یہ اہم شہری تنصیبات ، توانائی کی ترسیل اور عالمی معیشت کے استحکام کے لیے حقیقی خطرہ ہیں۔

کونسل کے مطابق حوثی ملیشیا کی جانب سے کیے گئے دہشت گرد حملے اس کی دہشت گرد طبیعت کے عکاس ہیں۔ ساتھ ہی ملیشیا کے حقیقی مقاصد کا بھی انکشاف کرتے ہیں کہ وہ خطے کے امن و استحکام کو بگاڑ سے دوچار کرنے پر تلی ہوئی ہے۔ علاوہ ازیں بین الاقوامی قوانین کو بھی چیلنج کر رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں