سعودی ائر ڈیفنس نے مملکت کے جنوبی علاقے ظھران پر داغا بیلسٹک میزائل تباہ کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمن کی آئینی حکومت کی رٹ بحالی میں مصروف عرب اتحاد نے سوموار کے روز بتایا کہ سعودی عرب کی ائر ڈیفنس نے مملکت کے جنوبی علاقے ظھران پر داغا جانے والا بیلسٹک میزائل ہدف تک پہنچنے سے پہلے تباہ کر دیا۔

عرب اتحاد کے اعلامیے کے مطابق بیلسٹک میزائل کے ٹکڑے ظھران شہر کے جنوب میں واقع انڈسٹریل زون میں گرے۔

علاقے سے ملنے والی اطلاعات میں بتایا گیا ہے کہ ناکام بیلسٹک میزائل حملے میں صنعتی شہر کی ایک ورکشاپ اور وہاں کھڑی عام شہریوں کی گاڑیوں کو نقصان پہنچا۔

جازان میں بیلسٹک میزائل حملے کا نشنہ بننے والی ورکشاپ
جازان میں بیلسٹک میزائل حملے کا نشنہ بننے والی ورکشاپ

ادھر عرب اتحاد نے یمن کی گورنری الجوف میں حوثی باغیوں کے بیلسٹک میزائل لانچنگ پیڈ کو تباہ کر دیا ہے۔ عرب اتحاد کے بقول باغیوں نے سوموار کو علی الصباح اس مقام کو ظھران پر داغے جانے والے بیلسٹک میزائل کے لیے استعمال کیا تھا۔

قبل ازیں حوثیوں کی جانب سے داغا جانے والا ایک اور بیلسٹک میزائل جازان شہر کے صنعتی علاقے میں گرا ہے۔

تفصیلات کے مطابق عرب اتحاد نے حوثیوں کے نئے حملے کے حوالے سے ابتدائی بیان میں کہا ہے کہ اتوار کو جازان کے انڈسٹریل ایریا میں حوثیوں کا ایک بیلسٹک میزائل گرا ہے۔ اس حملے کا مقصد علاقے میں موجود آبادی کو نقصان پہنچانا تھا- حملے کے نتیجے میں ایک رہائشی زخمی ہوا ہے۔

عرب اتحاد کے مطابق اس سے قبل جمعے کو بھی حوثیوں کی جانب سے خمیس مشیط شہر پر حملہ کیا گیا تھا جسے ناکام بنادیا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں